Code : 2303 83 Hit

امریکہ اقوام متحدہ کی میزبانی کا اہل نہیں؛ہم یہ فرض نبھانے کے لئے تیار ہیں: روس

اقوام متحدہ میں روس کے نائب مندوب نے یہ بھی کہا تھا کہ امریکہ کو یہ زیب نہیں دیتا کہ ایک طرف تو وہ اقوام متحدہ کا میزبان ہو اور دوسری طرف مسلسل اپنے عہد و پیمان کو توڑ کر سارے سسٹم کو درہم و برہم کرنا چاہے۔ چنانچہ اقوام متحدہ امریکہ کی جاگیر نہیں ہے بلکہ اس تنظیم میں تمام ممالک کی حصہ داری ہے لہذا اگر امریکہ کے بس میں اقوام متحدہ جیسے عالمی ادارے کی میزبانی نہیں ہے تو وہ ہمیں دے دے ہم روس کے شہر سوچی میں اقوام متحدہ کی میزبانی کا فرض ادا کرنے کے لئے تیار ہیں۔

ولایت پورٹل: روسی خبر رساں ایجنسی اسپوٹنیک کی رپورٹ کے مطابق  اقوام متحدہ میں روس کے مندوب کے نمائندے’’آندرہ بلوسوف‘‘ نے اقوام متحدہ کے جنیوا میں یہ مدعیٰ اٹھایا تھا کہ اب امریکہ اقوام متحدہ کی میزبانی کرنے کے لائق نہیں رہا لہذا اب اس تنظیم و ادارے کے دفاتر اور ذیلی شاخوں کو یورپ کے کسی اور ملک منتقل کردینا چاہیئے۔
بات در اصل یہ تھی کہ امریکہ نے روس کے 10 وزراء کہ جو اقوام متحدہ کے سالانہ اجلاس میں شرکت کی غرض سے امریکہ جانا چاہتے تھے انہیں ویزا دینے سے انکار کردیا جس کے سبب روس کے وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے امریکی حکومت کو اقوام متحدہ کی میزبانی کے لئے نااہل بتلایا تھا اور روس کے وزراء نے جنیوا میں گذشتہ اجلاس میں یہ مدعیٰ بھی اٹھایا تھا کہ اقوام متحدہ کے Disarmament Committeeسمیت دیگر شعبہ جات کو جنیوا یا یورپ کے دیگر ممالک میں منتقل کردینا چاہیئے جہاں ہر ملک کا نمائندہ آزادی کے ساتھ اجلاس میں شریک ہوسکے۔
اقوام متحدہ میں روس کے نائب مندوب نے یہ بھی کہا تھا کہ امریکہ کو یہ زیب نہیں دیتا کہ ایک طرف تو وہ اقوام متحدہ کا میزبان ہو اور دوسری طرف مسلسل اپنے عہد و پیمان کو توڑ کر سارے سسٹم کو درہم و برہم کرنا چاہے۔ چنانچہ اقوام متحدہ امریکہ کی جاگیر نہیں ہے بلکہ اس تنظیم میں تمام ممالک کی حصہ داری ہے لہذا اگر امریکہ کے بس میں اقوام متحدہ جیسے عالمی ادارے کی میزبانی نہیں ہے تو وہ ہمیں دے دے ہم روس کے شہر سوچی میں اقوام متحدہ کی میزبانی کا فرض ادا کرنے کے لئے تیار ہیں۔


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम