ایران کے ممتاز ایٹمی سائنسداں مسلح دہشتگردوں کے ہاتھوں شہید

اسلامی جمہوریہ ایران کے ممتاز ایٹمی سائنسداں محسن فخری زادہ کو مسلح دہشت گردوں نے شہید کردیا۔

ولایت پورٹل:اسلامی جمہوریہ ایران کے ممتاز ایٹمی سائنسداں  محسن فخری زادہ کو مسلح دہشت گردوں نے شہید کردیا۔
اطلاعات کے مطابق ایرانی وزارت دفاع نے ایک بیان میں اعلان کیا ہے کہ مسلح دہشت گردوں نے آج سہ پہر کو صوبہ البرز کے علاقہ دماوند میں ایران کے ممتاز ایٹمی سائنسداں کو فائرنگ کرکے زخمی کردیا جس کے بعد محسن فخری زادہ کو اسپتال منتقل کیا گيا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے درجہ شہادت پر فائز ہوگئے، ایرانی وزارت دفاع نے اس بزدلانہ حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہید محسن فخری زادہ کے قتل میں ملوث غیر ملکی ایجنٹوں اور دہشت گردوں کو گرفتار کرکے جلد از جلد کیفر کردار تک پہنجایا جائےگا، واضح رہے کہ اسرائیل نے اس سے قبل بھی ایران کے متعدد جوہری سائنسدانوں کو شہید کیا اور اسرائیل کے وزير اعظم نیتن یاہو نے محسن فخری کو بھی قتل کی دھمکیاں دی تھیں اور شہید محسن فخری کا نام اسرائیل کی ہٹ لسٹ میں سرفہرست تھا۔
مہر

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین