صیہونیوں کے ہاتھوں فلسطینی نوجوان شہید

فلسطینی ذرائع نے نابلس میں صیہونی قابض حکومت کے فوجیوں کے ہاتھوں ایک فلسطینی نوجوان کی شہادت اور تین دیگر کے زخمی ہونے نیز مسجد الاقصی پر صیہونی آبادکاروں کے حملے کی خبر دی ہے۔

ولایت پورٹل:شہاب خبررساں ایجنسی نے مغربی کنارے میں واقع نابلس میں صیہونی حکومت کی فوج کے ساتھ جھڑپوں میں ایک فلسطینی نوجوان کی شہادت کی خبر دی ، رپورٹ کے مطابق، عرین الاسود (بیشہ شیران) کے نام سے معروف مزاحمتی گروہ نے اس نوجوان فلسطینی کی شہادت کی خبر پر تعزیت کرتے ہوئے مزید کہا کہ التعاون علاقے کے رہنے والے فلسطینی نوجوان سائد الکونی نابلس میں موٹرسائیکل پر سوار تھے کہ صہیونی فوجیوں کے ساتھ  ان کی جھڑپ  ہوگئی  جس میں وہ صیہونیوں کی گولیوں سے شہید ہوگئے۔
واضح رہے کہ صہیونی آرمی ریڈیو نے فلسطینی نوجوان کی شہادت کی خبر کی تصدیق کرتے ہوئے اعلان کیا کہ ایک مسلح شخص کو اسرائیلی فوجیوں نے نابلس میں اسرائیلی چوکیوں پر فائرنگ کرنے کی وجہ سے ہلاک کر دیا نیز ان جھڑپوں کے نتیجے میں تین دیگر فلسطینی نوجوان سطحی سے زخمی ہوئے ، تاہم ان کی حالت خطرے سے باہر بتائی جاتی ہے۔
واضح رہے کہ نابلس میں نوجوان فلسطینی کی شہادت کی خبر پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے حماس کے ترجمان عبداللطیف القانوع نے کہا کہ نابلس اور مقبوضہ بیت المقدس کے دو قصبوں الطور اور سلوان میں ہونے والی جھڑپیں فلسطینی عوام کی طاقت کو ظاہر کرتی ہیں جس کے بعد مسجد اقصیٰ کے دفاع کے لیے جنگ میں داخل ہونے کے لیے اپنی مرضی اور تیاری کو مسلط کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین