فلسطینی سمجھ کی صیہونی کی صیہونی پر فائرنگ

صیہونی میڈیا کی طرف سے ایک فلسطینی نوجوان پر گولی چلانے کی خبر کے ایک گھنٹے بعد ان ذرائع ابلاغ نے اعلان کیا کہ مغربی کنارے کے قریب گولی لگنے والا شخص صیہونی ہے جسے غلطی سے کسی اور صیہونی نے گولی مار دی۔

ولایت پورٹل:صیہونی ذرائع ابلاغ کی جانب سے یہ اطلاع دینے کے ایک گھنٹے بعد کہ ایک نوجوان فلسطینی کو رام اللہ کے قریب گولی مار دی گئی، ان ذرائع ابلاغ نے صیہونی سکیورٹی ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ زخمی شخص صیہونی آباد کار ہے جس پر دوسرے آبادکار نے فلسطینی ہونے کے شبہے میں اور یہ سوچتے ہوئے کہ وہ اس پر حملہ کرنے جا رہا ہے، گولی چلا دی ۔
واضح رہے کہ فائرنگ کا یہ واقعہ جمعرات کی شب رام اللہ کے قصبے "نعلین" کے قریب "مخماس" گاؤں کے داخلی دروازے پر پیش آیا اور گزشتہ ہفتوں میں یہ دوسرا موقع ہے کہ کسی صہیونی نے غلطی سے دوسرے صیہونی کو گولی مار دی ہے۔
یاد رہے کہ اس سے پہلے صیہونی فوجیوں نے اپنے ایک حملے میں اپنے ساتھیوں پر گولیاں برسائیں جس کے نتیجے میں ایک صیہونی فوجی ہلاک ہو گیا، اس کارروائی سے قابض فوج کی بے عزتی ہوئی اور آئندہ حملوں میں اس کی تکرار کو روکنے کے لیے تحقیقات کی گئیں۔
قابل ذکر ہے کہ حال ہی میں مقبوضہ بیت المقدس میں ہونے والے تین دھماکوں اور مغربی کنارے کے مختلف علاقوں یہاں تک کہ 1967 کے مقبوضہ علاقوں کے اندر گھات لگانے، فائرنگ اور سرد ہتھیاروں سے حملوں جیسی صیہونی مخالف کارروائیوں کا سلسلہ صیہونیوں کے لیے خوف اور پریشانی کا باعث ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین