Code : 3866 8 Hit

حزب اللہ اور غزہ کے میزائل کسی بھی وقت تل ابیب کے بڑے بڑے ٹاوروں کو مٹی میں ملا سکتے ہیں؛صیہونی اخبار کا اعتراف

ایک صہیونی اخبار نے تل ابیب کو نشانہ بنانے کے لیے فلسطینیوں اور لبنانی مزاحمتی قوتوں کی میزائل طاقت کا اعتراف کیا ہے۔

ولایت پورٹل:القدس العربی  کی رپورٹ کے مطابق ، صہیونی اخبار یدیوت احرنوٹ نےاپنی ایک ایک رپورٹ میں غزہ کی فلسطینی مزاحمتی تحریک اور حزب اللہ کی میزائل طاقت کا اعتراف کرتے ہوئے کہا ہے کہ فلسطینی مزاحمت اور حزب اللہ کے پاس انتہائی درست اور طویل فاصلے تک مار کرنے والے میزائل ہیں، یہ میزائل تل ابیب کے ٹاوروں کو تباہ کرسکتے ہیں۔
اس رپورٹ میں اسرائیلی فوج کے سابق کمانڈر یوسی بنٹو کی گفتگو  کا حوالہ دیا گیا ہے جس میں کہا صیہونیوں کی جانب سے فوجی مشقیں کرنا اس بات کی علامت ہیں کہ  مزحمتی تحریک کے وسیع پیمانہ پر میزائل حملوں سے شدید خوف زدہ ہیں،ادھر حال ہی میں ، جہاد اسلامی فلسطینی تحریک کی فوجی شاخ کی قدس بٹالین کے ترجمان  ابو حمزہ نے صہیونی حکومت کی 2014 کی غزہ کے خلاف جنگ کی چھٹی برسی  کے موقع پر اعلان کیا تھا غزہ میں مزاحمت کے خلاف خفیہ اور کھلی جنگ کے باوجود دشمن اپنے مقاصد کو حاصل کرنے میں ناکام رہا۔
انہوں نے مزید کہاکہ اس وقت ہم میدان میں پہلے سے کہیں زیادہ مضبوط اور بہتر طور پر مسلح ہیں  کیوں کہ  جیسا کہ ہم ہمیشہ اپنی قوم کے بچوں اور اسلامی امت کے لئے ذمہ دار رہنے کا وعدہ کیاہے،ہم اس پر باقی ہیں اور اس کے بعد بھی باقی رہیں گے،انھوں نے مزید کہا کہ’’ بنیان مرصوص‘‘ آپریشن کے چھ سال بعد  تمام مقبوضہ فلسطین اور صیہونی حکومت کے حساس مراکز ہمارے زیر نظر ہیں اور ہمیں ان تک نہایت آسانی سے رسائی حاصل ہے،اس بات کو صیہونی حکام بھی بخوبی جانتے ہیں تبھی تو ان میں ہر وقت کھلی بلی سی مچی رہتی ہے اور مزاحمتی تحریک کا آمنا سامنا کرنے سے کتراتے رہتے ہیں۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین