Code : 2396 39 Hit

دہشتگردی کی مخالفت اور دہشتگردوں کی حمایت؛ترکی نے امریکہ کو لیا آڑے ہاتھوں

ترکی نے دہشتگردی کے سلسلہ میں امریکہ کی جانب سے پیش کی جانے والے رپورٹ پر شدید عمل کا اظہارکرتے ہوئے کہ شام میں دہشتگردوں کی حمایت کرتے ہو نیز فتح اللہ گولن کو پناہ دیے ہوئے ہو۔

 ولایت پورٹل:ترکی کی وزات خارجہ نےامریکی وزارت خارجہ کی طرف سے  دہشت گردی کےموضوع پر شائع ہونے والی رپورٹ کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے  کہا کہ واشنگٹن شامی پیپلز پروٹیکشن یونٹس کی حمایت کرتا ہے نیز فتح اللہ گولن کو بھی اس نے پناہ دے رکھی ہے،ترکی نے امریکہ کی مبینہ رپورٹ پر مزید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ کے اتحادی شامی کرد اور فتح اللہ گولن دونوں دہشت گرد ہیں لیکن امریکہ ایک کی حمایت کررہا ہے اور دوسرے کو اپنے ملک میں پناہ دے رکھی ہے،قابل ذکر ہے کہ امریکہ کی تین دن پہلے دنیا میں دہشت گردی کے موضوع پر ایک رپورٹ شائع کی ہے جس میں دوسرے ملکوں کے تئیں واشنگٹن کا موقف دہرایا ہے،امریکی رپورٹ میں ایک بار پھر ہرزہ سرائی کرتے ہوئے ایران،شام سوڈان اور شمالی کوریاکو دہشت گردوں کی حامی حکومتیں قرار دیا گیا ہے،ترکی کا کہنا ہے کہ امریکی وزارت خارجہ سے دہشتگردی کے موضوع پر شائع ہونے والی رپورٹ میں  لکھا کہ ترکی کے لیے داعش اور پی کے کے خطرہ ہیں  جس سے بچنے کے لیے ترکی کو کافی محنت کرنا ہوگی،یاد رہے  امریکہ پی کے کے کو ایک دہشت گرد تنظیم قرار دیتا ہے جس نے ترکی میں 2015سے لے کر2018  تک 1200سے زائد فوجی اہلکاروں اور عام شہریوں کو قتل کیا ہے،ترکی کی وزارت خارجہ نے امریکہ اور ترکی کے درمیان اور اختلافی موضوع کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ نے خود ساختہ جلاوطن دہشت گرد فتح اللہ گولن کو پناہ دے رکھی ہے جس نے ترکی میں بغاوت کرنے کی ناکام کوشش کی تھی،ہم نے کئی بار امریکی حکام سے درخواست کی ہے کہ اس کو ہمارے حوالہ کیا جائے لیکن انھیں ٹس سے مس نہیں ہوئی۔



0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम