زیادہ تر امریکی بڑھتی مہنگائی سے پریشان

امریکہ میں ہونے والے ایک سروے سے پتا چلتا ہے کہ امریکی شہری بڑھتی ہوئی مہنگائی سے سخت پریشان ہیں جو آنے والے کانگریسی انتخابات کے لیے ایک بڑا مسئلہ ہو گا۔

ولایت پورٹل:راسموسن انسٹی ٹیوٹ کی جانب سے ہفتے کے روز جاری کیے گئے ایک نئے سروے میں بتایا گیا ہے کہ 10 میں سے 9 امریکی ووٹرز بڑھتی ہوئی مہنگائی کے بارے میں فکر مند ہیں اور ہر پانچ میں سے چار رائے دہندگان کا خیال ہے کہ یہ مہنگائی نومبر کے کانگریس انتخابات میں ایک اہم مسئلہ ہو گی۔
ویب سائٹ CyanNews کے مطابق سروے میں یہ بھی آیا ہے کہ 60 فیصد رائے دہندگان نے کہا کہ جو بائیڈن کی حکومت کی پالیسیوں سے افراط زر میں اضافہ ہوا ہے جبکہ نصف رائے دہندگان نے بائیڈن کے انتظام کو معاشی مسائل پر کمزور قرار دیا، 15 فیصد نے اسے منصفانہ جبکہ 18 فیصد نے اچھا قرار دیا۔
یو ایس بیورو آف لیبر اسٹیٹسٹکس کا کہنا ہے کہ مارچ سے لے کر اب تک ریاستہائے متحدہ میں ملازمت کرنے والے افراد کی تعداد میں 353000 کی کمی واقع ہوئی ہے،ایک امریکی اخبار نے اس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ امریکی صدر کا معاشی انتظام کمزور  ہے، لکھا ہے امریکی معیشت 2022 کی پہلی سہ ماہی میں سست روی کا شکار رہی ہے، جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ ایک بڑا طوفان آنے والا ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین