غاصب صیہونیوں کے ہاتھوں400سے زائد فلسطینی باشندے دربدر

غیر قانونی صیہونی ریاست کی غیر قانونی حکومت کے ہاتھوں مقبوضہ بیت المقدس میں فلسطینیوں کے ایک سو ستّر سے زیادہ مکانات کی مسمار اور چار سو سے زائد باشندوں کے دربدر ہوگئے ہیں۔

ولایت پورٹل:محدود اختیارات کی حامل فلسطینی انتظامیہ کی وزارت خارجہ نے ایک بیان جاری کر کے اعلان کیا ہے کہ خود ساختہ غاصب صیہونی حکومت نے امریکہ کی موجودہ حکومت کی مدد سے مقبوضہ بیت المقدس کے عرب اور فلسطینی تشخص کو ختم کرکے اسے یہودیت کا رنگ دینے کے لئے یہودی کالونیوں کی تعمیر کا کام تیز کر دیا ہے۔
فلسطینی وزارت خارجہ نے شہر قدس میں صیہونی حکومت کے تمام اقدامات کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے اسے مسترد کر دیا اور عالمی برادری، اقوام متحدہ اور اس سے وابستہ اداروں سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ بیت المقدس اور اس کی حیثیت کے تحفظ کے لئے اپنی ذمہ داریوں پرعمل کریں۔
اقوام متحدہ کی قرارداد بائیس چونتیس کے مطابق، خود ساختہ صیہونی حکومت کی جانب سے یہودی کالونیوں کی تعمیرغیر قانونی ہے۔ اس کے باوجود امریکی، مغربی اور عرب حمایت یافتہ غاصب صیہونی ٹولہ تمام تر عالمی قوانین کو خاطر میں لائے بغیر اپنے توسیع پسندانہ اہداف کے لئے فلسطینیوں کے مکانات کو منہدم کر کے صیہونی کالونیوں کی تعمیر کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہے۔
سحر

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین