Code : 4678 20 Hit

فرانسیسی مصنوعات کے بائیکاٹ کی وسیع پیمانے پر مہم کا آغاز

عربی زبان سائبر صارفین نے پیغمبر اسلام کی حمایت میں فرانسیسی مصنوعات کے بائیکاٹ کی بڑے پیمانے پر مہم چلائی ہے۔

ولایت پورٹل:القدس العربی اخبار کی رپورٹ کے مطابق  فرانسیسی میڈیا میں پیغمبر اکرمﷺ کی توہین آمیز تصاویر کی اشاعت کی حمایت میں فرانسیسی صدر ایمانوئل میکرون کے حالیہ بیانات نے عالم اسلام میں غم و غصے کی لہر دوڑادی ہے، سائبرا سپیس میں عربی زبان کارکنوں نے فرانسیسی مصنوعات کے خلاف بڑے پیمانے پر مہم کا آغاز کیا ہے  اور سب سے پیغمبر اسلام کے دفاع میں ان مصنوعات کا بائیکاٹ کرنے کا مطالبہ کیا ہے، کچھ عرب ممالک  جیسے کویت نے  فرانسیسی مصنوعات سےاپنے تجارتی مراکز کو خالی کردیا۔
یادرہے کہ فرانسیسی صدر میکرون نے کہا تھا کہ پیرس ان کارٹونوں اور توہین آمیز تصاویر کی اشاعت بند نہیں کرے گا جس کے بعد  "ہمارے پیغمبر ہماری سرخ لکیر ہیں" ، "میکرون نے پیغمبر کی توہین کی ہے" اور "فرانسیسی مصنوعات کا بائیکاٹ" جیسے ہیش ٹیگز زیادہ تر عرب ممالک میں مشہور ہوئے ہیں، ان صارفین نے کہا کہ کسی مذہب کے مقدسات کی توہین کرنے کا مطلب آزادی اظہار رائے نہیں ہے، صارفین نے فرانسیسی مصنوعات کی ایک فہرست بھی شائع کی  ہے جس پر اس مہم میں پابندی عائد کی جانی چاہئے۔



0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین