Code : 2461 78 Hit

اردن کی غزہ میں صیہونی جارحیت کی مذمت

اردن کی وزارت خارجہ نے غزہ پٹی پر صیہونیوں کی جانب سے کی گئی حالیہ جارحیت کی مذمت کرتے ہوئے صیہونی حکام کو حملوں میں اضافے کا ذمہ دار قرار دیا ہے۔

ولایت پورٹل:اردن کی ویب سائٹ عمون کی رپورٹ کے مطابق اردن کی وزارت خارجہ کے ترجمان ضیف‌الله الفائز نے کہا کہ  غزہ پٹی میں اسرائیلی حملوں میں شدت اور بے گناہ شہریوں کو نشانہ بنانا خطے میں کشیدگی، تشدد اور شدت پسندی کے مزید فروغ کا سبب بنے گاانہوں نے مزید کہا کہ غزہ کے مسئلے کا حل صرف اور صرف اسرائیل فلسطین کے درمیان  مذاکرات ، غزہ کے محاصرے کو ختم کرنے ،وہاں جاری  انسانیت سوز مسائل کو حل کرنے اور بین الاقوامی قانون کے احترام کرنے کے ہی ذریعہ ممکن ہے،اردن کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے غزہ کی پٹی پر حملوں اور اس کے نتائج کا ذمہ دار اسرائیل کو قرار دیتے ہوئے  عالمی برادری سے اپیل کی ہے  کہ وہ جارحیت کو روکنے اور فلسطینی عوام کی حمایت کے لئے فوری طور پر کارروائی کرے،یادرہے کہ صیہونیوں نے جہاد اسلامی فلسطین کے دو دو سینئر ممبروں کے قتل کے لئے گذشتہ روز (منگل / 6 نومبر) کو غزہ اور دمشق پر دو حملے کیے،غزہ میں وہ اپنے مقصد میں کامیاب ہوگئے اور اورجہاد  اسلامی کی فوجی شاخ سرایاالقدس برگیڈ کے  ایک اعلی کمانڈر بہاء اللہ شہید ہوگئے لیکن دمشق حملہ میں وہ اپنے ناپاک منصوبہ میں کامیاب نہیں ہوسکے،ان دو حملوں کے جواب صیہونیوں کو تل ابیب میں میزائل بارش کی صورت میں ملی اور سرایا القدس نے اعلان کیا کہ یہ کھیل صیہونیوں نے شروع کیا ہے لیکن اب اس کو ختم کرنا ہمارے اختیار میں جب ہم چاہیں گے ختم ہوگا،جس کے بعدصرف گذشتہ رات میں 190راکٹ مقبوضہ فلسطین کی جانب فائر ہوئے ،تاہم صیہونیوں کی جانب سے کل دن اور رات میں کیے جانے والے حملوں میں 11فلسطینی شہید ہوگئے۔



0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम