Code : 1861 7 Hit

اسرائیل کو فلسطینیوں کے مکانات مسماری کا عمل فورا بند کرنا چاہیے:اقوام متحدہ

مشرق وسطیٰ کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی نیکولائے میلاڈینوف نے ایک بیان میں کہا ہے کہ وادی الحمص میں فلسطینیوں کے گھروں کی مسماری بین الاقوامی قوانین کی توہین کے مترادف ہے۔

ولایت پورٹل:قابض صہیونی فوج کی طرف سے فلسطین کے مقبوضہ بیت المقدس میں صور باھر کی وادی الحمص کالونی میں فلسطینیوں کے ایک درجن سے زاید مکانات کی مسماری پر اقوام متحدہ کی طرف سے شدید رد عمل کا اظہار کیا گیا ہے، مشرق وسطیٰ کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی نیکولائے میلاڈینوف نے ایک بیان میں کہا ہے کہ وادی الحمص میں فلسطینیوں کے گھروں کی مسماری بین الاقوامی قوانین کی توہین کے مترادف ہے، ان کا کہنا ہے کہ مکانات گرنے کے مذموم عمل کے نتیجے میں مزید سیکڑوں فلسطینی مکان کی چھت سے محروم ہوجائیں گے،انہوں نے کہا کہ اسرائیلی حکام کی طرف سے مکانات کی مسماری کے نتیجے میں متاثر ہونے والے فلسطینیوں‌ کی فوری بحالی کا کوئی امکان نہیں، اسرائیل کو مکانات مسماری کا عمل فورا بند کرنا چاہیے،خیال رہے کہ اسرائیلی فورسز نے بین الاقوامی تنقید اور فلسطینیوں کے احتجاج کو بالائے طاق رکھتے ہوئے مقبوضہ بیت المقدس کے نواح میں فلسطینیوں کے مکانوں کو مسمار کرنا شروع کردیا ہے،سیکڑوں اسرائیلی فوجی اور پولیس اہلکار مقبوضہ مشرقی القدس کے نواح میں واقع فلسطینی گاؤں صورباہر میں بلڈوزروں اور بھاری مشینری کے ساتھ فلسطینیوں کے مکانوں کو منہدم کرنے کی کاروائی میں حصہ لے رہے ہیں، یہ گاؤں اسرائیل کی علاحدگی کی باڑ کے نزدیک واقع ہے اور اس کے مکینوں کو اب سکیورٹی کے نام پر بے دخل کیا جارہا ہے۔
خیبر


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम