عراقی عوام کا صیہونیوں کے خلاف مظاہرہ، صیہونی پرچم نذر آتش

عراقی عوام نے اس ملک کے دار الحکومت بغداد میں صہیونی حکومت کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے خلاف ایک ریلی نکالی جس میں صیہونی کومت کے پرچم کو نذر آتش کیا۔

ولایت پورٹل:عراقی سوشل میڈیا نے عراقی دارالحکومت میں صیہونی حکومت کے ساتھ معمول معمول پر لانے کے خلاف ریلی کی اطلاع دی ہے، صابرین نیوز کی خبر کے مطابق  عراقی دارالحکومت بغداد میں صیہونی حکومت کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے مخالف مظاہرین نے صہیونی حکومت کے جھنڈے کو نذر آتش کیا، رپورٹ کے مطابق یہ ریلی بغداد کے صدر شہر میں نکالی گئی ، اور مظاہرین نے صیہونی حکومت کے ساتھ تعلقات معمول پر لانے کے ساتھ ساتھ منحل شدہ بعثیوں کی واپسی کی مخالفت پر بھی زور دیا۔
واضح رہے کہ  قبل ازیں عراقی حکومت کے ترجمان احمد ملا طلال نے کہا تھا کہ عراقی آئین کے مطابق صیہونیوں کے ساتھ تعلقات معمول پر لانا ممنوع ہے ،انھوں نے مزید کہا کہ متحدہ عرب امارات ، بحرین اور سوڈان کا صیہونی حکومت کے ساتھ امن معاہدہ کرنا ان ممالک کا اپنا مسئلہ ہے ہمیں اس سے کوئی لینا دینا نہیں۔
یادرہے کہ  صیہونیوں کے ہاتھوں فلسطینیوں پر کیے جانے والے مظالم کو نظرانداز کرتے ہوئے کچھ شیخ نشین عرب ریاستوں کے حکمران صیہونی حکومت کے ساتھ تعلقات بحال کرنے میں ایک دوسرے سے سبقت لے جانے کی کوششوں میں مصروف ہیں جن میں سعودی عرب ، متحدہ عرب امارات  اور بحرین پیش پیش ہیں جس سے صیہونی مزید جری ہو رہے ہیں اور وہ آئے دن فلسطینیوں پر نت نئے مظالم ڈھا رہے ہیں کبھی ان کے کھیتوں کو تباہ کرتے ہیں تو کبھی گھروں پر حملہ کر انھیں مسمار کرنے کے ساتھ ساتھ گھر سے سرپرست کو بغیر کسی الزام کے حراست میں لے لیتے ہیں جس کے بعد چھوٹے چھوٹے بچوں اور خواتین کو شدید سردی میں کھلے آسمان تلے زندگی گذارنے پر مجبور ہونا پڑتا ہے۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین