Code : 4107 4 Hit

ایران کا 90 ٹن سے زائد امدادی سامان لبنان پہنچ چکا، مزید 60 ٹن تیار

ایران کی طرف سے اب تک 90 ٹن امداد لبنان پہنچا دی گئی ہے جبکہ مزید 60 ٹن سامان بھیجنے کے لئے آمادہ ہے

ولایت پورٹل:اسلامی جمہوریہ ایران کے ہلال احمر ادارے کے سربراہ نے کہا ہے کہ ایران نے بیروت میں ہونے والے دھماکے سے متاثرہ لبنانی عوام کے لئے 90 ٹن سے زائد طبی ،غذائی اور دیگر ضروری سامان بیروت پہنچا دیا ہے،اسلامی جمہوریہ ایران کے ہلال احمر ادارے کے سربراہ کریم ہمتی نے کہا ہے کہ ایران نے بیروت میں ہونے والے دھماکے سے متاثرہ  لبنانی عوام کے لئے 90 ٹن سے زائد طبی ،غذائی اور دیگر ضروری سامان بیروت پہنچا دیا ہے۔
انھوں نے کہا کہ دیگر ممالک کی نسبت ایران کے شرائط مختلف ہیں۔ لبنان کے عوام مسلمان ہیں ان کا خون ہمارا خون ہے جس کی وجہ سے ہماری ذمہ داریاں دوچنداں ہوجاتی ہیں، انھوں نے کہا کہ ایران کے ہلال احمر ادارے کی طرف سے امداد انسانی اور دوستانہ بنیادوں پر ہوتی ہے، کسی بھی ملک کو اگر امداد کی ضرورت ہو تو ایران کسی سیاسی پالیسی کے بغیر مدد فراہم کرتا ہے۔
ہمتی نے کہا کہ ایران پہلا ملک ہے جس نے لبنان کو امداد فراہم کی، ایرانی ہلال احمر کے کارکن بیروت سانحہ کے 8 گھنٹوں کے بعد 5 ٹن امدادی سامان  لیکر لبنان پہنچ گئے، اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ ایرانی ہلال احمر کے کارکن ہمہ وقت امداد کے لئے تیار ہیں۔
انھوں نے کہا کہ ایران کی طرف سے اب تک 90 ٹن امداد لبنان پہنچا دی گئی ہے جبکہ مزید 60 ٹن سامان  بھیجنے کے لئے آمادہ ہے، ہمتی نے کہا کہ ہم سخت شرائط میں لبنانی عوام کو تنہا نہیں چھوڑیں گے۔
ایک طرف ایران نے انسان دوستی کا مظاہرہ کیا ہے جبکہ دوسری طرف عرب ممالک نے سرف لبنان کے زخموں پر نمک ہی چھڑکا ہے خاص کر سعودی عرب کی عوام سے لے کر چینلوں تک  جنہوں نے امریکہ اور صیہونیوں کو خوش کرنے کے لیےلبنانی عوام کی مدد کرنے کے بجائے اس واقعہ کو لے کر فرقہ واریت کو ہوا دینے میں کوئی کسر باقی نہیں چھوڑی جہاں صیہونیوں نے کہا کہ یہودیوں کی عید پر لبنان میں شاندارتش بازی ہوئی ہے وہی  صیہونی  نواز بعض سعودی  شہریوں نےہمیں لبنانی عوام سے کوئی محبت نہیں ہے۔

مہر



0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین