Code : 3566 12 Hit

رہبر ایران نے حقوق انسانی کے امریکی دعووں پر سوالیہ نشان لگادیا: ایسوسی ایٹڈ پریس

امریکی نیوز ایجنسی نے لکھا ہے کہ اسلامی انقلاب کے اعلی رہنما آیت اللہ خامنہ ای نےامام خمینی کی 31 ویں برسی کے موقع پر تقریر کرتے ہوئے ریاستہائے متحدہ میں ہونے والے ملک گیر مظاہروں پر روشنی ڈالی۔

ولایت پورٹل:امریکی نیوز ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس نے امام خمینی کی 31 ویں برسی کے موقع پر اسلامی انقلاب کے قائد آیت اللہ خامنہ ای  کی ٹیلی ویژن تقریر کا حوالہ دیتے ہوئے لکھا ہے کہ انھوں نے امریکہ کی جانب سے انسانی حقوق کی پامالیوں کو بیان کیا ہے۔
مذکورہ امریکی نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق ارج فلائیڈ (امریکہ میں) کے قتل کے سلسلہ میں ایران کے سپریم لیڈر نے واشنگٹن کے انسانی حقوق سے متعلق مبینہ دوہرے معیار کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔
اس کے بعد ایسوسی ایٹڈ پریس نے آیت اللہ علی خامنہ ای کی تقریر کے ایک اور حصے کا حوالہ دیا جس میں رہبر انقلاب نے جارج فلائیڈ کے نسل پرستانہ قتل کے سلسلے میں امریکی انسانی حقوق کے دعووں کو کھوکھلا قرار دیتے ہوئے کہاکہ بظاہر وہاں پر مارےجانے والا سیاہ فام امریکی شہری کو انسان بھی نہیں سمجھا گیا۔
مذکورہ امریکی ذرائع نے اپنی رپورٹ کے ایک اور حصے میں  انقلاب کے اعلیٰ رہنما کی سیاہ فام امریکیوں کے خلاف نسل پرستانہ تشدد کے بارے میں "جارج فلائیڈ" کے موت سے قبل آخری الفاظ کے بارے میں گفتگو  کا ذکر کیا ہے۔
ایسوسی ایٹڈ پریس نے آیت اللہ علی خامنہ ای کی تقریر کے اس حصہ کا ذکر کیا جس میں انھوں نے فلائیڈ کی موت کی وضاحت کی اور اس نے بار بار کہا  کہ میں سانس نہیں لے سکتا،آیت اللہ خامنہ ای نے کہا کہ یہ کوئی نئی چیزیں نہیں ہیں ، ریاستہائے متحدہ کی حقیقت یہی ہے اور یہ امریکی پوری دنیا کے خلاف ایسا ہی کر رہے ہیں۔



0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین