Code : 2637 91 Hit

ایرانی صدر کا 19سال بعد جاپان کا دورہ

اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر 19سال بعد جاپان کے دورہ پر جارہے ہیں۔

ولایت پورٹل:فارس نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر ڈاکٹرحسن روحانی منگل کو ملائشیاگئے ہیں جہاں سے جاپانی وزیر اعظم آبے شنزو سے ملاقات کے لئے جاپان جائیں گے،قابل ذکر ہے کہ یہ سفر ابے کے تہران کے دورے کے صرف چھ ماہ بعد ہوا ہے ، اور ایٹمی معاہدے سے متعقلق  ایران کی جانب سےکیے گئے  وعدوں کو کم کرنے کے چوتھے مرحلے میں داخل ہونے کے ایک ماہ سے کچھ ہی زیادہ عرصہ گزرنے کے بعد ہورہا ہے جس کی وجہ سےاس سفر نے متعدد اس نے تجزیہ کاروں کی توجہ اپنی جانب مبذول کرلی ہے،ڈاکٹر روحانی نے تہران چھوڑنے اور ملائشیا (سفر کی پہلی منزل) جانے سے پہلے ٹوکیو کے اپنے سفر کے اہداف کا خاکہ پیش کرتے ہوئے کہا کہ  ان چھ سالوں کے دوران  خاص طور پر مسٹر آبے کی صدارت کے دوران تہران اور ٹوکیوکے درمیان تعلقات کو فروغ ملا ہے،انھوں نے مزید کہا کہ میں اقوام متحدہ کی  جنرل اسمبلی میں شرکت کے لئے جتنی بار بھی نیویارک گیا ہوں میں نے جاپانی وزیر اعظم سے ملاقات کی ہے،ایرانی صدر نے کہا کہ جاپانی وزیر اعظم  اس سال جون میں تہران بھی آئے تھے جہاں انھوں نے اسلامی جمہوریہ  ایران کے سپریم لیڈر اور مجھ سے ملاقات کی  جس میں ہمارے درمیان دوطرفہ تعلقات اور مختلف امور پر تبادلہ خیال ہوا،روحانی نے رواں سال  میں جاپانی وزیر اعظم کے ساتھ اپنی تیسری ملاقات کے بارے میں بیان کرتے ہوئے کہا کہ ایران اور جاپان کے درمیان سیاسی تعلقات کا یہ 90 واں سال ہے،انھوں نے کہا کہ جاپان نے ایران میں انقلاب کے بعد اچھی اور اہم معاشی سرگرمیاں اور سرمایہ کاریاں کی ہیں،روحانی کا کہنا تھا کہ آج بھی ہم ماحولیاتی امور پر قریبی اور اچھی بات چیت کر رہے ہیں۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین