Code : 3330 26 Hit

تنقید کرؤ گے تو خاشقجی والا حشر کردیں گے؛ الجزیرہ کے معروف اینکر کو دھمکی

الجزیرہ کے ایک معروف اینکر نے انکشاف کیا ہے کہ سعودی عرب کا نام تبدیل کرنے اور سعودی پرچم سے "لا الہ الا اللہ" کے فقرے کو ہٹانے کی درخواست کے بعد انھیں جان سے مارنے کی دھمکی دی گئی ہے۔

ولایت پورٹل:القدس العربی  نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق قطر ی چینل  الجزیرہ کے مشہور پیش کنندہ جمال ریان نے انکشاف کیا کہ انھوں نے  سعودی عرب کا نام تبدیل کرنے اور سعودی پرچم سے "لا الہ الا اللہ" کے فقرے کو ہٹانے کی درخواست کی تھی جس کے بعد انھیں جان سے مارنے کی دھمکی دی گئی اور کہا گیا کہ زیادہ بولو گے جو جمال خاشقجی کی طرح ٹکڑے ٹکڑے کردیے جاؤ گے۔
ریان نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ پر لکھا کہ انہوں نے ٹویٹ کیا کہ موت کی دھمکی اور آل سعود کی نقل و حرکت انہیں سچ بولنے سے نہیں روک پائے گی نیزخاشقجی انداز میں مجھے جان سے مارنے کی دھمکی مجھے کبھی بھی سچ بولنے سے نہیں روک سکے گی اور میں سچ بولتا رہوں گا اس لیے کہ  میں خدا کے سوا کسی سے نہیں ڈرتا ہوں۔
جمال ریان کے خلاف یہ دھمکیاں اس وقت سامنے آئیں جب انہوں نے سعودی عرب کا نام تبدیل کرنے اور سعودی پرچم سے "لا الہ الا اللہ" کے فقرے کو ہٹانے کا مطالبہ کیا تھا۔
انہوں نے لکھاتھا کہ اب وقت آگیا ہے کہ المملکة العربیہ السعودیہ کا نام  بدل کر المملکة العربیہ السلمانیہ رکھا جائے اور اس ملک کے جھنڈے سے" لا الہ الا اللہ محمد رسول اللہ "اور تلوار کو ہٹا دیا جائے  اور  ایسا اس لیے ہونا چاہیے کہ اس ملک میں سیاسی ، مذہبی اور خاندانی تبدیلیوں آچکی ہیں۔
ایک اور ٹویٹ میں  انہوں نے لکھا کہ سعودی عرب امت مسلمہ کا اعتماد کیوں کھو بیٹھا ہے؟ کیونکہ اس نے عرب بہار ، فلسطین ، یمن اور شام کے خلاف سازش کی ہے اور مصر میں بغاوت کی حمایت کی ہے اور قطر پر پابندیاں عائد کردی ہیں۔
اس نے خاشقجی کو ترکی میں اپنے قونصل خانے میں قتل کیا ہے، مسلم املاک لوٹ لی ہیں اور حج اور عمرہ کو سیاسی بنا دیا ہے۔
 
 




0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین