Code : 2505 29 Hit

داعش نے لندن حملے کی ذمہ داری قبول کرلی

داعش دہشت گرد گروہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ گزشتہ روز لندن میں پیدل چلنے والوں پر چاقو سے حملہ کرنے والا شخص انھیں کا آدمی تھا۔

ولایت پورٹل:بدنام زمانہ دہشتگرد تنظیم داعش نے ہفتے کے روز ایک بیان جاری کیا جس میں برطانوی دارالحکومت لندن میں راہگیروں پر ہونے والے حملے کی ذمہ داری قبول کرنے کا دعوی کیا گیا ہے،یاد رہے کہ عثمان خان نامی ایک   28 سالہ شخص نے  لندن برج پر چلنے والے رہگیروں پر چاقو سے حملہ کردیا جس کے نتیجہ میں ایک شخص زخمی ہوگیا تاہم بعد میں  پولیس نے حملہ آور کو ہلاک کردیا ،برطانوی میڈیا کا کہنا ہے کہ   اس سے پہلے بھی عثمان 2012 میں  لندن اسٹاک ایکسچینج میں دہشت گردانہ  حملہ کرنے کی کوشش کے الزام میں گرفتار ہوا تھا  اور اس کو 16سال کی سزا سنائی گئی تھی  جس میں سے وہ  اپنی آدھی سزا کاٹنے کے بعد رہا گذشتہ سالر رہا ہوا تھا،اس حملے کے بارے میں داعش کے بیان میں کہا گیا ہے کہ کل کے لندن  میں  حملہ کرنے والے شخص  اسلامی خلافت کے جنگجوؤں میں سے ایک تھا اور اس نے امریکی شہریوں پر حملہ کرنے کی اپیل کے جواب میں یہ کاروائی کی،مقامی میڈیا کی  رپورٹس کے مطابق ، خان المحاجرون نامی ایک تنظیم سے منسلک تھا جس کی سربراہی سعودی عرب کا تعلیم یافتہ انتہا پسند سلفی مبلغ عمر بکری محمد  کررہا ہے ،یاد رہے کہ لند ن پولیس نے کل کے حملہ کو ایک دہشتگردانہ حملہ قرار دیا ہے،قابل ذکر  ہے کہ عین اسی وقت اسی طرح کا واقع دی ہیگ ہالینڈ میں پیش آیا ہے  اور فرانس میں بھی ایک بم دریافت ہواہے۔


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम