ایسا کام کرؤں گا کہ کوئی بھی روس کے ساتھ جنگ کرنے کی نہ سوچے:روسی صدر

روسی صدر نے اپنے ایک انٹرویو میں کہا کہ ہم کسی سے لڑنا نہیں چاہتا ایسا کام کرؤں گا کہ کوئی بھی روس کے ساتھ جنگ کرنے کے بارے میں نہیں سوچےگا ۔

ولایت پورٹل:روسی نیوز ایجنسی تاس کی رپورٹ روسی صدر ولادیمیر پوتن نے ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ روس ایسے حالات پیدا کررہا ہے کہ دنیا کا کوئی بھی ملک روس کے ساتھ جنگ کے بارے میں کبھی نہیں سوچے گا۔
تاہم  روسی صدر نے اس بات پر زور دیا کہ دنیا میں فوجی اور دفاعی اخراجات کے معاملے میں یہ ملک ساتویں نمبر پر ہےاور امریکہ ، چین ، سعودی عرب ، برطانیہ ، فرانس یہاں تک کہ جاپان روس کے مقابلے میں دفاعی اور دفاعی اخراجات پر زیادہ خرچ کرتے ہیں۔
انہوں نے مزید کہا کہ اس کے علاوہ میں یہ کہنا چاہوں گا کہ ہمارے فوجی دفاعی اخراجات کم ہورہے ہیں جبکہ دوسرے ممالک اس میں اضافہ کررہے ہیں۔
پوتن نے روس کی دفاعی اور فوجی صلاحیت کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے پہلی بار ایسا جارحانہ نظام تشکیل دیا ہے جس کا دنیا نے اس سے پہلے کبھی مشاہدہ نہیں کیا۔
اب دیگر ممالک ہم تک پہنچنے کی کوشش کر رہے ہیں۔
یہ ایک انوکھی صورتحال ہے اور پہلے کبھی نہیں تھی۔
روسی صدر نے اپنے جارحانہ نظام  کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ الٹراسونک اور بین البراعظمی میزائل ہیں۔
انھوں نے اپنے انٹرویو میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ اپنی ملاقات کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ٹرمپ نے مجھے بتایا کہ انہوں نے (کانگریس کے ممبروں) نے اگلے سال کے لئے ایک بہت دفاعی بڑا بجٹ منظور کرلیا ہے جو میرے خیال سے 738 ارب ڈالر پر مبنی ہے ۔
پوتن نے کہا کہ ٹرمپ اس بجٹ پر افسوس کا اظہار کررہے تھے۔

1
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین