حزب اللہ لبنانیوں کی ایک بڑی جماعت کی ترجمان ہے؛ لبنانی عہدہ دار کا صیہونیوں کو دندان شکن جواب

اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل میں لبنانی نمائندہ نے صیہونیوں کی جانب سے حزب اللہ پر عائد کیے جانے والے الزامات کو بے بنیاد اور جھوٹا قرار دیا۔

ولایت پورٹل:این بی این کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل میں لبنانی نمائندہ نے سلیم بدوره نے صیہونیوں کی جانب سے حزب اللہ پر عائد کیے جانے والے الزامات پر رد عمل کا اظہار کیا،یادرہے کہ ہمیشہ کی طرح  جنیوا میں اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے اجلاس میں صہیونی وفد نے حزب اللہ کے خلاف ووٹ ڈالنے اور لبنان کی شبیہہ کو داغدار بنانے کے لئے اس اجلاس کو استعمال کرنے کی کوشش کی،تاہم لبنانی وفد  صیہونیوں کو دندان شکن جواب دیتے ہوئے اس غیر قانونی حکومت کی انسانی حقوق سے متعلق زیادتیوں کا ذکر کیا،لبنانی وفد کے سربراہ سلیم بدورہ نے صیہونیوں کے الزامات کے جواب میں کہا کہ حزب اللہ لبنانی تنظیم ہے اور وہ لبنانی عوام کے ایک بڑے گروپ کی نمائندگی کرتی ہے،یہ تنظیم قبضے کے خلاف مزاحمت کا حصہ ہے اور لبنانی سیاسی زندگی میں حصہ لیتی ہے۔
لبنانی  نمائندےنے مزید کہاکہ حزب اللہ کے خلاف دہشت گردی کا الزام بہتان اور جھوٹا ہے  خاص طور پر چونکہ یہ الزامات ایک قابض حکومت نے لگائے ہیں جو اپنے خلاف مزاحمت کرنے والے تمام لوگوں کی شبیہہ کو داغدار بنانا چاہتی ہے، لبنانی نمائندہ نے صیہونی حکومت کے نمائندے کے بیان کردہ متضاد بیانات پر بھی زور دیا  جس میں فلسطینی عوام اور عرب ممالک کے خلاف انسانی حقوق کی پامالیوں اور اقدامات سے بھری  ہوئی تاریخ ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین