Code : 3150 75 Hit

زیتون کے تیل کا روزانہ آدھا چمچہ؛دلی امراض کے لئے فائدہ مند

امریکا میں کی گئی ایک تازہ تحقیق کا خلاصہ ہے جس سے معلوم ہوا ہے کہ جو لوگ اپنی روزمرہ غذا میں آدھا چمچہ زیتون کا تیل شامل رکھتے ہیں، انہیں دل کے مختلف امراض کا خطرہ بہت کم ہوتا ہے۔

ولایت پورٹل: ہارورڈ ٹی ایچ چین اسکول آف پبلک ہیلتھ، بوسٹن میں پی ایچ ڈی کی طالبہ مارٹا گواش فیرے اس تحقیق کی مرکزی مصنفہ ہیں جن کا کہنا ہے کہ دل کی صحت پر زیتون کے تیل کے مثبت اثرات یورپی اور یوریشیائی آبادیوں میں واضح ہوچکے ہیں لیکن یہ پہلا موقع ہے جب امریکی آبادی کےلئے زیتون کے تیل کی افادیت بھی ثابت ہوگئی ہے۔
یعنی ہم یہ کہہ سکتے ہیں کہ زیتون کا تیل کم و بیش ہر رنگ و نسل کے لوگوں کےلئے مفید ہے۔ اس کی ایک اہم وجہ یہ بھی ہے کہ زیتون کا تیل ’’اومیگا تھری فیٹی ایسڈ‘‘ کہلانے والے پروٹین سے بھرپور ہوتا ہے جو دل، دورانِ خون اور دماغ تک کو فائدہ پہنچاتا ہے۔
اس تحقیق کےلئے امریکیوں میں کھانے پینے کی عادات اور معمولات سے متعلق کئے گئے وسیع مطالعات میں حاصل شدہ اعداد و شمار کا تجزیہ کیا گیا، جو 1990 تک کا احاطہ کرتے ہیں۔
تجزیئے کی روشنی میں یہ بات سامنے آئی کہ جو لوگ روزانہ (کسی نہ کسی صورت میں) زیتون کے تیل کا آدھا چمچہ یا اس سے کچھ زائد مقدار اپنی غذا میں شامل رکھتے ہیں، ان میں دل کے امراض کا عمومی خطرہ 15 فیصد تک کم ہو جاتا ہے ،جبکہ دل تک خون پہنچانے والی شریانیں تنگ ہونے کے نتیجے میں ہونے والے امراضِ قلب کی شرح 21 فیصد تک گھٹ جاتی ہے۔
البتہ، حالیہ مطالعہ میں اضافی طور پر یہ بات بھی سامنے آئی کہ زیتون کے تیل کے علاوہ مختلف سبزیوں کا تیل بھی دل کی صحت کےلئے مفید ہے لہذا زیتون کا تیل میسر نہ ہو تو کوئی سا بھی معیاری سبزیجاتی تیل (ویجیٹیبل آئل) دل کو یکساں طور پر فائدہ پہنچا سکتا ہے۔
مذکورہ تحقیق کی تفصیلات امریکن ہارٹ ایسوسی ایشن کے تحت فینکس، ایریزونا میں منعقدہ ’’لائف اسٹائل اینڈ کارڈیو میٹابولک ہیلتھ سائنٹفک سیشنز‘‘ میں پیش کی گئی ہے۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین