Code : 2791 63 Hit

جنرل سلیمانی نے ہمارے خلاف منصوبے تو بنائے تھے لیکن نہیں معلوم کیا تھے اور ان پر کب عمل ہونا تھا:امریکہ

امریکی وزیر خارجہ نے جنرل سلیمانی کو قتل کرنے کا بہانہ تلاش کرتے ہوئے کہا کہ انھوں نے ہمارے خلاف منصوبے تو بنائے تھے لیکن نہیں معلوم کیا تھے اور ان پر کب عمل ہونا تھا۔

ولایت پورٹل:فاکس نیوز ایجنسی کو انٹرویو دیتے ہوئے امریکی وزیر خارجہ مائک پومپیو نے آج پاسداران اسلامی کی  قدس فورس کے کمانڈر سردار قاسم سلیمانی کے علاقے میں امریکی مفادات پر حملہ کرنے کے مبینہ منصوبے کے بارے میں اپنے اور دیگر امریکی عہدہ داروں کے الزامات کے خلاف متضاد بیانات دیئے،جنرل سلیمانی پر خطے میں امریکی مفادات کو نقصان پہنچانے کی کوشش کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے ، انہوں نے اعتراف کیا کہ انہیں ان پروگراموں کے اوقات اور مقام کے بارے میں کوئی معلومات نہیں ہے،جبکہ اس سے پہلے وائٹ ہاؤس اور پینٹاگون نے  دعویٰ کیا تھا  کہ ایران امریکہ مخالف کارروائیوں کو انجام دینے کے لیے فوری طور پر اقدام کرنے والا تھا،امریکی وزیر خارجہ نے فاکس نیوز کو بتایا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ فوری طور پر حملوں کا ایک سلسلہ قاسم سلیمانی نے تیار کیا تھا لیکن ہمیں نہیں معلوم کہ انھیں کب اور کہاں انجام دیا جانا تھا ،جب فاکس نیوز کے نامہ نگار نے پومپیو سے پوچھا  کہ  امریکی صدر نے تو  کہا  تھا کہ سردار سلیمانی ذاتی طور پر بغداد میں امریکی سفارتخانے کو اڑا دینا چاہتے تھے ، پومپیو نے اس سوال کا براہ راست جواب دینے سے گریز کرتے ہوئے  دعویٰ کیا کہ انھیں کی افواج  تھیں  تو ابھی کچھ دن پہلے بغداد میں امریکی سفارت خانے میں دراندازی کر رہی،انھوں نے مزید کہا کہ  اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ کمانڈر قاسم سلیمانی نہ صرف ہماری فوج اور سفارت کاروں کے خلاف بلکہ دنیا بھر کے دیگر ممالک کے خلاف بھی کارروائی کرنے کا رجحان رکھتے تھے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین