جنرل قاسم سلیمانی کا خون رائگان نہیں جا سکتا:اقوام متحدہ میں ایرانی مندوب

اقوام متحدہ میں اسلامی جمہوریہ ایران کے نمائندے نے کہاکہ سپاہ پاسداران  کی قدس فورس کے سابق کمانڈر سردار سلیمانی کے قتل میں ملوث مجرموں کو ضرور سزا ملے گی۔

ولایت پورٹل:اقوام متحدہ میں اسلامی جمہوریہ ایران کے نمائندے مجید تختِ راونچی نے ایک انٹرویو میں کہا کہ قدس فورس کے سابق کمانڈر سردار قاسم سلیمانی کے قتل میں ملوث مجرموں کو ضرور سزا ملے گی،تخت راونچی نے این بی سی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے میزبان کے ایک سوال کہ ایران  نےسردار سلیمانی کے قتل کا بدلہ لینے کی  جو دھمکی کیا وہ اس پر عمل درآمد کرے گا،کہا کہ اس قتل کا بدلہ ضرور لیا جائے گا کیونکہ یہ ایک ایسے شخص کا قتل ہے جس نے  دہشت گرد تنظیموں کے خلاف جنگ میں موثر کردار ادا کیا۔
ین بی سی رپورٹر نے اقوام متحدہ میں ایران کے سفیر سے سوال کیا کہ کیا ایران امریکہ کے ساتھ قیدیوں کے تبادلے کے لئے تیار ہے؟ انھوں نے اس کا مثبت جواب دیتے ہوئے کہا کہ  ہم دونوں اطراف کے قیدیوں کے جامع تبادلے کے لئے تیار ہیں، یہ پوچھے جانے پر کہ ایران ایٹمی معاہدہ کے بارے میں امریکہ کے ساتھ بات چیت دوبارہ شروع کرنے کے لئے کیا اقدامات اٹھانے کے لئے تیار ہے ، تخت راونچی نے کہاکہ یہ گیند امریکہ کی فیلڈمیں ہے، امریکہ نے مذاکرات کی میز کو 2018 میں چھوڑ دیا  لہذا یہ فیصلہ امریکی فریق پر منحصر ہے کہ آیا نئی انتظامیہ پچھلی انتظامیہ کی دیوالیہ پالیسی کو جاری رکھنا چاہتی ہے یا وہ نیا صفحہ کھولنا چاہتی ہے،یہ سب نئی امریکی انتظامیہ پر منحصر ہے۔
انھوں نے کہا کہ جیسے ہی امریکہ اپنی ذمہ داریاں پوری کرے گا اسلامی جمہوریہ ایران بھی اس معاہدے کے تحت اپنی ذمہ داریوں کو پورا کرے گا،تخت راونچی نے کہا کہ  ایران نے متعدد بار کہا ہے کہ جیسے ہی وہ اپنی ذمہ داریاں پوری کریں گے ، ایران معاہدے پر مکمل عمل درآمد کرنے کی طرف لوٹ آئے گا۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین