یمن میں سعودی اور اماراتی کرائے کے فوجیوں کے درمیان شدید جھڑپیں

 جنوبی یمن میں سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کے کرائے کے فوجیوں کے درمیان شدید جھڑپیں ہوئی ہیں۔

ولایت پورٹل:العربی الجدید کی رپورٹ کے مطابق یمن کے جنوبی صوبے شبوہ میں سعودی حمایت یافتہ یمن کی مستعفی حکومت کے فوجیوں اور متحدہ عرب امارات کی حمایت یافتہ عبوری کونسل کے مسلح گروہوں کے درمیان  خونریزجھڑپیں ہوئی ہیں جن میں درجنوں آلہ کار ہلاک و زخمی ہوئے، تاہم ابھی تک ہلاک اور زخمی ہونے والوں کی صحیح تعداد کے بارے میں کوئی رپورٹ سامنے نہیں آئی۔
یاد رہے کہ سعودی عرب کے حمایت یافتہ یمن کی مستعفی حکومت کے حامی فوجیوں اور متحدہ عرب امارات کی حمایت یافتہ عبوری کونسل کے مسلح گروہوں کے درمیان یہ جھڑپیں یمن میں اپنا اپنا اثرو رسوخ بڑھانے کے لئے دوبارہ شروع ہوئی ہیں۔
واضح رہے کہ سعودی عرب امریکہ ، متحدہ عرب امارات اور چند دیگر ممالک کی مدد کے ساتھ مارچ دوہزار پندرہ سے یمن پر جارحانہ حملوں کے ساتھ ہی اس ملک کا بری، بحری اور فضائی محاصرہ کئے ہوئے ہے، یمن پر سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں کے حملوں میں اب تک قریب سترہ ہزار یمنی شہید، دسیوں ہزار زخمی اور لاکھوں بے گھر اور دربدر ہو چکے ہیں جکبہ حال ہی میں جنگ بندی ہوئی ہے لیکن اس ملک کا محاصرہ پھر بھی ختم نہیں ہوا ہےاور نہ عالمی برادری نے اس سلسلہ میں کچھ کیا ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین