Code : 3270 35 Hit

فی الحال ہمارے 5200 فوجی عراق میں رہیں گے:امریکی اتحاد

عراق میں موجود امریکی اتحاد کے ترجمان نے کہا ہے کہ فوجی اڈوں سے امریکی فوجیوں کی حالیہ منتقلی کا کچھ ٹھکانوں پرراکٹ فائر کیے جانے سے کوئی تعلق نہیں ہے اور یہ کہ فی الحال عراق میں امریکی اتحاد کے5000 سے زائد فوجی رہیں گے۔

ولایت پورٹل:سعودی عرب کے اخبار الشرق الاوسط کی رپورٹ کے مطابق گذشتہ روز عراق میں امریکی اتحادی افواج نے کرکوک میں کے ڈبلیو کے اڈے کا کنٹرول عراق کے حوالے کرنے کا اعلان کیا تھا۔
امریکی اتحاد نے گذشتہ ہفتے بھی شمالی عراق کے صوبہ الانبار  کےالقائم اڈے اور صوبہ نینوا کے القیارہ اڈے سے اپنی فوجوں کے انخلا کا اعلان کیا تھا۔
روزنامہ الشرق الاوسط نے  داعش کے خلاف بننے والے نام نہاد امریکی  اتحاد کے ترجمان مائل کوگنس سے اس انخلاء کی وجہ بارے میں سوال کیا تو اس کے جواب میں انھوں نے کہا کہ ان اڈوں سے انخلاکا پہلے سے منصوبہ بن چکا تھا اور اس  کورونا کے پھیلنے سے یا مذکورہ ٹھکانوں پر ہونے والے حالیہ حملوں سے کوئی تعلق نہیں ہے۔
مذکورہ سعودی اخبار نے کوگنس  سے دریافت کیا کہ کیا فوجی اڈوں کو چھوڑنے کا مطلب عراق میں اتحادی افواج کی تعداد کو کم کرنا ہے؟ جس کا جواب انہوں نے دیاکہ  کچھ اتحادی افواج عراق اور کویت کے مختلف اڈوں میں دونوں ممالک کی حکومت کے ہم آہنگی سے منتقل ہوجائیں گی اور کچھ واپس چلی جائیں گی۔
انھوں نے مزید کہا کہ ہزاروں  فوجی مشیروں اور فوجی ٹرینر سمیت فی الحال عراق میں  امریکی اتحاد کے5200 فوجی رہیں گے۔
امریکی اتحاد کے ترجمان کا کہنا تھا کہ عراقی اڈوں سے نکلنے والےکچھ فوجی اپنے اپنے ممالک میں واپس چلے جائیں گے  اور کچھ کو خطے کے دوسرے اڈوں میں منتقل کردیا جائے گا۔

 

1
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम