عراق کی بحرانی صورتحال سے متحدہ عرب امارات کو 13 بلین ڈالر کا منافع:عراقی تجزیہ کار

عراقی نجباء تحریک کے ترجمان نے کاکچھ معاشی اعداد و شمار کا موازنہ کرکے حکومت کی مؤثر تجارتی پالیسی پر تنقید کرتے ہوئے ابوظہبی کے عراق کو غیر مستحکم کرنے کے کردار انکشاف کیا۔

ولایت پورٹل:عراقی اسلامی مزاحمتی تحریک کے سکریٹری جنرل نصر الشمری نے بین الاقوامی تجارتی اعداد و شمار پر نظر رکھنے والی معاشی تنظیم او ای سی کی ایک رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے عراقی حکومت کے متحدہ عرب امارات کے ساتھ تبادلے اور معاہدوں کی حمایت کی پالیسی پر تنقید کی ، رپورٹ کے مطابق  انہوں نے 2019 کے سرکاری اعدادوشمار کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ متحدہ عرب امارات میں عراق کی برآمدات جو زیادہ تر تیل کی مصنوعات ہیں  1.27 بلین ، اور عراق کی اس ملک سے درآمدات ، جس میں ایک اہم حصہ سیٹلائٹ کا سامان شامل ہے ،7 ارب ہے، دوسرے الفاظ میں یوں کہا جائے کہ  123.43 بلین ڈالر کا تجارتی توازن متحدہ عرب امارات کے حق میں ہے۔
 الشمری نے مزید کہاکہ یہ اس وقت کی ہے جب قطر سے عراق  کی درآمدات تقریبا$ 30 ملین ڈالر ، سعودی عرب سے تقریبا$ 700 ملین ڈالر اور امریکہ سے 1.2 ارب ڈالر ہیں،انھوں نے کہا کہ ہم امریکہ کو .3 6.3 بلین ڈالر کا تیل بیچتے ہیں، اس کا مطلب عراق کے حق میں 5.1 بلین ڈالر جبکہ ہم چین کو 22 ارب ڈالر برآمد کرتے ہیں اور اس ملک سے 9 بلین ڈالر کی درآمد کرتے ہیں جو ابھی تک عراق کے حق میں 13 بلین ڈالر ہےجبکہ ترکی سے عراق کی درآمدات تقریبا$ 10 بلین اور ایران سے 8 ارب ڈالر ہیں  جن میں سے تقریبا$ 1 بلین ڈالر بجلی گھروں کے لئے گیس ہے، اس کےنجباء بعد ڈپٹی سیکرٹری جنرل نے زور دے کر کہا کہ یہ تمام اعداد وشمار قابل فہم اور جواز ہیں  خاص طور پر بڑے صنعتی ممالک جیسے امریکہ ، چین ، ایران اور ترکی کے معاملے میں،تاہم امارات جیسے چھوٹے ممالک جو صرف ایک بندگاہ یا تجارتی دفتر  کے مالک ہیں ،عراق کو 13 ارب ڈالر کی برآمدات کے منافع اپنے جیب میں ڈالتے ہیں  ، 13 ارب ڈالر!
 الشمری نے یہ پوچھا کہ بغداد براہ راست چین جیسے پیداواری ممالک میں کیوں نہیں جاتا ہے، خاص طور پر چونکہ دونوں فریقوں کا تجارتی توازن عراق کے حق میں ہے ، اور جب ہم بجلی کی فراہمی کے لئے تقریبا ایک ارب ڈالر خرچ کرتے ہیں پھر بھی اس میدان میں بہت ساری پریشانیوں کا سامنا ہے ،تاہم ہمارا ملک  اسی وقت متحدہ عرب امارات سے غیر میعاری اور زیادہ انرجی  استعمال  کرنے والے سیٹلائٹ آلات درآمد کے لئے تین ارب ڈالر مختص کرتا ہے۔!؟


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین