چین اور روس کا امریکہ کا مقابلہ کرنے کے لیے مشترکہ پلان

چین اور روس امریکہ اور یورپی گلوبل پوزیشننگ سسٹم کا مقابلہ کرنے کے لیے مل کر کام کر رہے ہیں۔

ولایت پورٹل:این پی آر کی رپورٹ کے مطابق چین اور روس امریکہ اور یورپی گلوبل پوزیشننگ سسٹم کا مقابلہ کرنے کے لیے مل کر کام کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں اور یہ تعاون شروع ہو گیا ہے،چین نے اس سے قبل روس کے ساتھ اپنی سرزمین پر روس کے GLONASS گلوبل نیویگیشن سیٹلائٹ سسٹم کے زمینی اسٹیشنوں کی نگرانی پر اتفاق کیا ہے جس کے بدلے میں ماسکوچین کے Baidu سیٹلائٹ سسٹم کے لیے زمینی اسٹیشن تعینات کرنے پر راضی ہوا۔
واضح رہے کہ یہ سیٹلائٹس امریکی GPS اور یورپی گیلیلیو کے ساتھ، گلوبل نیویگیشن سیٹلائٹ سسٹم کا حصہ ہیں جبکہ چین کا بیڈووی سسٹم 35 سیٹلائٹس کے ساتھ سویلین اور فوجی استعمال کرنے والوں کے لیے درست جغرافیائی مقامات فراہم کرتا ہے۔
یادرہے کہ گزشتہ روز واشنگٹن میں روس کے سفیر اناتولی انتونوف نے نیوز ویک کو بتایا کہ دنیا کی موجودہ صورتحال روس اور چین سے اپنی اسٹریٹجک شراکت داری کو مضبوط کرنے کی متقاضی ہے لیکن وہ اس تعاون میں کسی جغرافیائی سیاسی اہداف کو حاصل نہیں کرنا چاہتے۔
انہوں نے کہا کہ امریکہ اور نیٹو کے برعکس ہم کسی بھی آزاد ملک کے خلاف کوئی جیو پولیٹیکل اہداف حاصل نہیں کرنے کی کوشش میں نہیں ہیں،انتونوف نے مزید کہاکہ  روسی خارجہ پالیسی کا ہدف بین الاقوامی تعلقات میں ایک پائیدار اور مستحکم نظام کی تشکیل ہے جس کی بنیاد مساوات، باہمی احترام اور دوسرے ممالک کے اندرونی معاملات میں عدم مداخلت کے قوانین اور اصولوں پر مبنی ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین