امریکی میڈیا سربرہان کے ساتھ مناظرہ کرنے کو تیار ہوں: ٹرمپ

ڈونلڈ ٹرمپ نے امریکی ایڈیٹرز اور میڈیا ایگزیکٹوز سے کہا ہے کہ وہ ان کے ساتھ 2020 کے صدارتی انتخابات میں دھاندلی کے الزامات کے بارے میں مناظرہ کریں۔

ولایت پورٹل:سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اخبار اور میڈیا ایگزیکٹوز کے نام جاری کردہ  ایک بیان میں کہا ہے کہ اگر کوئی 2020 کے انتخابات کے بارے میں حقائق کے بارے میں نہ کہ افسانے کے بارے میں مناظرہ کرنا چاہتا ہےتو براہ کرم مجھے بتائے اس لیے کہ یہ میڈیا کے لیے ایک اعزاز ہے۔
یادرہے کہ  2020 کے انتخابات کے ایک سال بعد ڈونلڈ ٹرمپ کے اصرار کے باوجود کہ ووٹنگ کے عمل میں دھاندلی ہوئی تھی، رائے عامہ کے جائزے اس بیان کی تصدیق نہیں کرتےجبکہ ٹرمپ انتظامیہ کے اٹارنی جنرل ولیم بار نے حالیہ ہفتوں میں کہا ہے کہ 2020 کے انتخابات میں دھاندلی یا بے ضابطگیوں کا کوئی ثبوت نہیں ملا۔
درایں اثنا امریکی کانگریس کی تحقیقاتی کمیٹی، جو اس وقت کانگریس کی عمارت پر 6 جنوری کو ہونے والے حملے کی تحقیقات کر رہی ہے، کا کہنا ہے کہ اس کے پاس اس بات کے ثبوت ہیں کہ ڈونلڈ ٹرمپ تشدد میں براہ راست ملوث تھے،تاہم ڈونلڈ ٹرمپ نے ان الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ کانگریس کی عمارت پر حملہ جعلی انتخابی نتائج کے خلاف عوامی احتجاج کا نتیجہ تھا۔
ادھروائٹ ہاؤس کی انٹیلی جنس کمیٹی کے چیئرمین ایڈم شِف نے کہاکہ ہم نے مواخذے کے ذریعے اس سال کے انتخابی تشدد کے لیے سابق صدر کو جوابدہ ٹھہرانے کی کوشش کی نیز ہم اب بھی اس سلسلے میں ان کی اور ان کے اردگرد کے لوگوں کی طرف سے ہونے والی بدتمیزی کے بارے میں پوری حقیقت سے پردہ اٹھانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین