ارجنٹائن کا پاکستان سے 12 لڑاکا طیارے خریدنے کا اعلان

ارجنٹائن کی حکومت نے اپنی ہتھیاروں کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے اپنے تازہ ترین اقدام میں پاکستان سے   GF-17 کے 12لڑاکا طیارے خریدنے کا فیصلہ کیا ہے  جو چین کے ساتھ مشترکہ منصوبہ ہےاور اس کی پیداوار لائن حالیہ برسوں میں پاکستان میں  شروع کی گئی ہے۔

ولایت پورٹل:پاکستانی میڈیا نے ہفتے کے روز اطلاع دی کہ ملکی دفاعی صنعت میں ایک بڑی تبدیلی نے ارجنٹائن کی حکومت کے ایجنڈے پر مقامی جے ایف 17 تھنڈر لڑاکا طیارے کی خریداری کو شامل کر دیا ہے، ارجنٹائن کی حکومت کی جانب سے کانگریس میں پیش کردہ دفاعی بجٹ کے مسودے کے مطابق پاکستان سے 662 ملین ڈالر مالیت کے 12 لڑاکا طیاروں کی خریداری اس ملک کے ایجنڈے میں شامل ہے، ارجنٹائن پاکستانی لڑاکا طیارے خریدنے کے لیے 2022 کے مالی بجٹ پر 662 ملین ڈالر خرچ کرے گا،یادرہے کہ جے ایف 17 تھنڈر سنگل انجن ملٹی رول فائٹر ہے جو پاکستان ایوی ایشن کمپلیکس اور چائنا چینگدو ایئرلائنز نے مشترکہ طور پر تیار کیا ہے۔
 معماروں کا کہنا ہے کہ اس  لڑاکا کو مختلف کرداروں کے لیے استعمال کیا جا سکتا ہے ، بشمول روک تھام ، زمینی حملہ ، اینٹی شپ اور ایئر ریکونیسنس، یادرہے کہ  فرنٹ فیوزلج ، ونگز اور ورٹیکل سٹیبلائزر سمیت پچاس فیصد طیارے پاکستان میں تیار کیے جاتے ہیں جبکہ 42 فیصد چین میں تیار کیے جاتے ہیں اور حتمی اسمبلی پاکستان میں ہوتی ہے۔ واضح رہے کہ  پچھلے سال دسمبر میں  پاکستان ایوی ایشن کمپلیکس نے  GF-17 ، چوتھی نسل کے17 جدید ترین مقامی لڑاکا طیارے پاکستانی فضائیہ کو فراہم کیے
قابل ذکر ہے کہ  اسلام آباد  بیجنگ کے تعاون سے  GF-17 لڑاکا طیارے تیار کرنے کے علاوہ  سپر مشاق نامی تربیتی طیارے بھی تیار کرتا ہے  اور اس کی برآمد کے لیے مارکیٹنگ کے لیے سخت کوشاں ہے،بھاری دفاعی سازوسامان کی پیداوار کے میدان میں ہم پاکستان کی ٹینک ، بکتر بند گاڑیاں اور توپ خانے تیار کرنے کی صلاحیت کا ذکر کر سکتے ہیں۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین