آپ بن سلمان سے ملنے آرہے ہیں!؛ بائیڈن کے ریمارکس پر عربی ردعمل

امریکی صدر کے حالیہ ریمارکس جس میں انہوں نے کہا کہ وہ ریاض کے دورے کے دوران سعودی ولی عہد سے دو طرفہ ملاقات نہیں کرریں کے،پر عربوں کی جانب سے شدید ردعمل سامنے آیا۔

ولایت پورٹل:رشیا ٹوڈے کی رپورٹ کے مطابق امریکی صدر جو بائیڈن کے حالیہ ریمارکس، جس میں انہوں نے سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے ساتھ اپنی آنے والی ملاقات کی اہمیت کو کم کر دیا، نے سوشل میڈیا پر بڑے پیمانے پر عرب ردعمل کو جنم دیا، رپورٹ کے مطابق یہ رد عمل بائیڈن کے اس بیان کے بعد سامنے آیا  جس میں انہوں نے کہا کہ میں محمد بن مسلم سے نہیں ملوں گا،میں ایک بین الاقوامی میٹنگ میں جا رہا ہوں جس میں وہ بھی شرکت کریں گے۔
بائیڈن کے تبصرے پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے سعودی صحافی فہد الثبیتی نے لکھا کہ امریکی میڈیا نے ہمیں بائیڈن کے ساتھ الجھا دیا ہے کہ آیا وہ محمد بن سلمان سے ملاقات کریں گے یا نہیں؟ اب ہمارے میڈیا کے لیے ضروری ہے کہ وہ اسی طرح کا رد عمل ظاہر کرے اور صحیح سوال دہرائے کہ محمد بن سلمان کے بائیڈن سے رابطہ کرنے سے انکار کرنے کے بعد، کیا وہ مختصر طور پر ان سے ریاض میں ملاقات کریں گے، یا ان کے پروگراموں میں کوئی مزید اہم شیڈول ہے ؟
واضح رہے کہ عربی زبان کے میڈیا اور کارکنوں کے علاوہ، بائیڈن کے ریاض کے دورے نے امریکیوں کی جانب سے بھی احتجاج اور تنقید کو ہوا دی ہے۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین