Code : 2912 21 Hit

صدی ڈیل کی نقاب کشائی کے دن کو عوامی غم و غصے کے دن میں تبدیل کرنے کی اپیل

مغربی پٹی میں قومی اور اسلامی مزاحمتی تحریک نے ایک بیان میں کہا ہے کہ امریکہ کے مذموم منصوبے کی نقاب کشائی کا دن عوامی غم و غصے کا دن بن جانا چاہئے نیز فلسطینی قوم واشنگٹن کے حکم پر دستبرداری نہیں کرے گی۔

ولایت پورٹل:العربی الجدید نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مغربی پٹی کے رملہ اور البیرا صوبوں میں قومی اور اسلامی مزاحمتی تحریک  نے اعلانیہ جاری کیا ہے جس میں اپیل کی گئی  ہے کہ فلسطین کے لئے صدی کی ڈیل" کے نام سے جانے جانے والے امریکی منصوبے کی نقاب کشائی کا دن  متفقہ طور پر فلسطینی عوام کی جانب سے عوامی غصے کا دن بننا چاہئے تاکہ پوری  فلسطینی عوام یہ اعلان کرے کہ اس منصوبے پر عمل درآمد نہیں ہوگا ۔
بیان میں آیا ہے کہ  صدی  ڈیل کے معاہدے کے قریب ہونے کے بارے میں من گھڑت میڈیا شور مچایا ہوا ہے  جبکہ اس کا بیشتر حصہ گذشتہ برسوں کے دوران نافذ کیا گیا ہے  لیکن اب اس کا مقصد فلسطینی رہنماؤں اور قوم کی مسلسل مخالفت کے کے پیش نظر نفسیاتی جنگ چھیڑنا ہے۔
مذکورہ بیان میں مزید آیا ہے کہ فلسطینی عوام ہتھیار نہیں ڈالیں گے ، اور اپنے قومی اور جائز حقوق کی بحالی ، خودمختاری ، قومی آزادی نیزقدس مرکز کے ساتھ ایک خودمختار ریاست کے قیام کے مطالبہ سے ایک قدم بھی پیچھے نہیں ہٹیں گے۔
بیان میں آیا ہے کہ فلسطینی عوام آمریت اور بلیک میلنگ کے خلاف میدان چھوڑ کر نہیں جائیں گے اوراپنے فیصلے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کوکرنے کی اجازت ہرگزنہیں دیں گے۔
مغربی پٹی کی قومی اور اسلامی مزاحمتی تحریک کا کہنا ہے کہ صیہونی وزیر اعظم بنیامین نتین یاہو اور امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے موقف میں ہم آہنگی یہ بتلاتی ہے فلسطین کے خلاف ناپاک عزائم میں دونوں برابر کے شریک ہیں۔  


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین