یمن میں آل سعود کی ایک اور رسوائی؛ انصاراللہ کے میزائلوں کی جگہ امریکی فلم دکھائی دی

یمن میں سعودی جارح اتحاد اس قدر بوکھلاہٹ کا شکار ہے کہ اس نے یمنی فوج اور عوامی کمیٹیوں کی میزائل سائٹ کے بجائے عراق کے بارے میں ایک امریکی فلم کی تصاویر جاری کردیں۔

ولایت پورٹل:المسیرہ چینل کی رپورٹ کے مطابق  یمنی فوج کے ترجمان یحیی سریع نےسعودی جارح اتحاد کے ترجمان ترکی المالکی  جاری کردہ  تصاویر جن میں انھوں نے دعوی کیا کہ سعودی اتحاد نے الحدیدہ کی بندرگاہ میں میزائلوں کا مشاہدہ کیا  ہے ،رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے ٹویٹ کیاکہ  سعودی جارح اتحاد کے ترجمان ترکی المالکی  اس قدر بوکھلاہٹ کا شکار ہیں اور جھوٹ بول رہے ہیں کہ  یمنی میزائل سایٹ  کے نام پر انھوں نے جو تصویریں شائع کی ہیں وہ عراق میں امریکی اڈے کی چوری ہونے والی تصاویر  ہیں ۔
انہوں نے جھوٹ بولنا، حقائق کو مسخ کرنا اور سعودی جارح اتحاد کی جانب سے رائے عامہ کو گمراہ کرنے کی کوشش کواس  اتحاد کی پائیدار فطرت کا حصہ قرار دیتے ہوئے زور دیا کہ جھوٹ بولنے والے کو بالآخر بے نقاب کیا جائے گا۔
عربی زبان کے میڈیا کے مطابق سعودی جارح اتحاد کی جانب سے یہ دعویٰ اس وقت کیا گیا جب کہ تحقیقات میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ جارح اتحاد کے ترجمان ترکی المالکی" کی  جانب سے شائع کی جانے والی مبینہ تصاویر کرسچن فراگ کی  اس دستاویزی فلم (سیویر کلیئر) کی ہیں جو 2009  میں عراق پر امریکی فوجی حملے کے بارے میں ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین