فلسطینی مجاہدین کے ہاتھوں صیہونیوں کو ایک اور مہلک دھچکا

فلسطینی عسکریت پسندوں کی گزشتہ رات کی کارروائی نے صہیونیوں میں خوف و ہراس پھیلا دیا ہے، خاص طور پر چونکہ انہیں اپنی سکیورٹی اور فوجی اداروں پر اعتماد نہیں رہا ہے۔

ولایت پورٹل:ان دنوں صیہونی پہلے سے زیادہ دہشت میں ہیں، اس کی وجہ فلسطینی جنگجوؤں کا آپریشن ہے جو مقبوضہ علاقوں کے اندر انجام دیا گیا ہے جس نے صیہونیوں اور ان کے حکام کی نیندیں اڑا دی ہیں۔
یاد رہے کہ حال ہی میں صیہونیوں کے خلاف کئی کارروائیاں ہوئی ہیں، جن میں سے تازہ ترین کارروائی العاد کے علاقے میں ہوئی،ایک ایسا آپریشن جس نے صیہونی عہدہ دار کے مطابق صہیونی جشن کو ماتم میں بدل دیا،اس آپریشن کے بعد شہر کے میئر نے سب کو گھروں میں رہنے اور دروازے بند کرنے کو کہا۔
صیہونی حکومت کے چینل 14 نے آپریشن العاد کے موقع پر انتہا پسند کنیسیٹ کے رکن ایتمار بن غفیر نے حملے کی جگہ کی تصاویر شائع کیں جس کے بعد صیہونیوں نے نفتالی بینیٹ کے استعفے کا مطالبہ کیا ہے۔
آپریشن العاد کے بارے میں قابل ذکر بات یہ ہے کہ فوج اور اس حکومت کے تمام سکیورٹی ادارے اس عسکری کارروائی کے مرتکب افراد کو گرفتار کرنے میں ناکام رہے ہیں اور انہوں نے اس آپریشن کے مرتکب افراد کی شناخت کے لیے صہیونی آبادکاروں کی طرف رجوع کیا ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین