ترکی بھی عراق اور شام سے جانے والا نہیں:ترک حزب اختلاف رہنما

ترک حزب اختلاف کے ایک رہنما اور کرد پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کے سینئر ممبر نے کہا کہ ترک فوج کا شمالی عراق سے دستبرداری کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔

ولایت پورٹل:المعلومہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق کرد پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کے سینئر ممبر ، محمد علی اصلان نے کہا کہ ترکی شمالی عراق سے پیچھے نہیں ہٹے گا نیز ترک حکومت کی خواہش ہے کہ اس کی افواج ایک طویل عرصے تک عراق اور شام میں موجود رہیں۔
انہوں نے کہا کہ ترک فوج کبھی بھی عراق یا شام نہیں نکلے گی اس لیے کہ ترکی چاہتا ہے کہ اس کی افواج ایک طویل عرصے تک ان دونوں ممالک میں رہیں۔
انہوں نے مزید کہا کہ ماضی میں مشرق وسطی اور ترکی میں بڑے ممالک مداخلت کرتے تھے  اور ترکی واحد تماشائی تھا  لیکن اب ترک حکومت کہتی ہے کہ صورتحال مختلف ہے اور عراق اور شام میں ہونے والے واقعات میں اسے اپنا کردار ادا کرنا چاہئے۔
یادرہے کہ سن 2015 میں ترک فوجیں عراقی سرزمین میں داخل ہوئیں اور تب سے صوبہ نیناوا کے بعشیقہ کے علاقے میں ایک کیمپ میں تعینات ہیں اور عراق چھوڑنے کے لیے تیار نہیں ہیں۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین