Code : 3200 44 Hit

عراق میں امریکی اڈے پر حملہ کے ذمہ داری ایک نامعلوم تنظیم نے قبول کر لی

عصبۃ الثائرین نامی ایک نامعلوم تنظیم نے عراق میں امریکی فوجی اڈے التاجی رپ حملہ کرنے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔

ولایت پورٹل:المیادین نیوز ایجنسی نے  عراقی ذرائع ابلاغ کا حوالہ دیتے ہوئے لکھا ہے کہ  عراق میں عصبۃ الثائرین نامی ایک تنظیم نے اپنی موجودگی کا اعلان کیا ہے اور امریکی فوجی اڈے التاجی رپ حملہ کرنے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔
مذکورہ گمنام عراقی نئے گروپ نے ایک بیان جانری کرتے ہوئے اپنے آپ کو مزاحمتی تنظیم اورعراق میں امریکہ کی موجودگی کی مخالف کہا ہے   نیزاس نے بغداد کے التاجی اڈے پر راکٹ فائر سمیت امریکی ٹھکانوں پر حالیہ حملوں کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے امریکی قابضین کو عراق سے بے دخل کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔
واضح رہے کہ اس گمنام عراقی گروپ کے بارے میں کسی کو کچھ پتا نہیں ہے اور اس نےاپنے پہلے بیان میں اس گروپ کے رہنماؤں کی شناخت کا کوئی ذکر نہیں کیا گیا ہے۔
یادرہے کہ عراق میں امریکی فوجی اڈےالتاجی   پرگذشتہ بدھ کے دن درجنوں راکٹ فائر کیے گئے جس کے بعد جمعہ کی صبح امریکی لڑاکا طیاروں نے صوبہ کربلا کے ایک شہری ہوائی اڈے  سمیت اس  صوبے اور  بابل ، صلاح الدین اور الانبار صوبوں میں عراقی پولیس ، فوج اور الحشد الشعبی  کے متعدد ٹھکانوں پر بمباری کی۔
التاجی شہر ، جہاں التاجی فوجی اڈہ واقع ہے ، عراق کے دارالحکومت بغداد کے شمال میں واقع ہے۔
یہ فوجی اڈہ بغداد سے85 کلومیٹر شمال میں واقع ہے جو صدام کی حکومت کے دوران صدارتی گارڈ سے وابستہ ایک اہم اڈہ تھا۔




1
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین