Code : 2506 27 Hit

بن زائد کے بھائی کے بارے میں اظہار خیال کرنے کے جرم میں اماراتی پروفیسر کے اثاثے منجمد

متحدہ عرب امارات کے ایک مخالف رہنماء نے بن زائد کے بھائی پر تنقید کرنے کے جرم میں اپنے بینک اکاؤنٹس بلاک کرنے کا دعوی کیا ہے۔

ولایت پورٹل:امارات یونیورسٹی کے پروفیسر اور حکومت مخالف رہنماء یوسف الیوسف  کا کہنا ہے کہ حکومتی عہدیداروں نے دبئی کے اسلامی بینک میں ان کے اکاؤنٹس کو بلاک کردیا ہے،انہوں نے کہا کہ میں نے  ابو ظہبی کے ولی عہد  محمد بن زاید کے  سوتیلے بھائی سلطان محمد بن زاید کے بارے میں ہےاپنے خیالات کا اظہار کیا تھا،انھوں نے ٹویٹر کے اپنے اکاؤنٹ پر لکھا ہے کہ ولی عہد کے بھائی پر تنقید کرنے کے دودن بعد مجھے پتا چلا کہ دبئی کے اسلامی بینک میں میرے اکاؤنٹس کو بلاک کردیا گیاہے،انھوں نے مزید کہا کہ اب یہیں سے اندازہ لگالیں کہ اس ملک کا کیا ہوگا جس پر بچے حکومت کررہے ہوں،الیوسف نے اس سلسلہ مزید کہا کہ مجھے نہیں معلوم  محمد بن زاید کو اس کی اطلاع ہے یا نہیں لیکن یہ میں تبا دوں کہ میں نے یہ پیسے حلال راستے سے کمائے اور ان کی زکات بھی ادا کرچکا ہوں،انہوں نے مزید کہا کہ نہ مجھ پر عدالت میں کوئی مقدمہ ہے اور نہ ہی میں  نے کسی کے حقوق کی خلاف ورزی نہیں کی ہے اور جب تک کہ کوئی خاص مسئلہ یا سیاسی معاملہ نہ ہو تب تک اس طرح کی کارروائی ممکن نہیں ہوگی،اماراتی یونیورسٹی کے سابق ماہر معاشیات نے بن زاید کو یاد دلایا کہ میں آپ سے گزارش کرتا ہوں کہ میرے اور مجھ جیسے دیگر افراد کے اثاثوں کو منجمد کرنے کے  بجائے کچھ سال پہلے سرکاری فنڈ میں ہونے والے 12 ارب ڈالر کے غبن کی تحقیقات کروائے اگر آپ خود  اس غبن میں شریک  نہیں ہیں ۔




0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम