اپنے ملک میں امریکی جرائم کو برداشت نہیں کریں گے:عراقی پارلیمنٹ ممبر

عراقی پارلیمنٹ ممبر نے عراق میں امریکی اتحاد کی موجودگی کی وجہ سے لاحق خطرات سے خبردار کیا۔

ولایت پورٹل:المعلومہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق  عراقی رکن پارلیمنٹ فالح الخزعلی نے عراق میں امریکی اتحاد کی وجہ سے لاحق خطرات سے نمٹنے کی اہمیت پر زور دیا، انہوں نے مزید کہا کہ عراق میں امریکی زیرقیادت بین الاقوامی اتحاد کی موجودگی کا کوئی قانونی جواز نہیں ہے، الخزعلی نے کہاکہ ہم عراق میں عوامی تنطیموں  کے خلاف امریکی اتحاد کے جرائم پر خاموش نہیں رہیں گے، انہوں نے کہا ،کہ عراق میں اس بین الاقوامی اتحاد کی موجودگی ہمارے معاشرے کی سلامتی اور امن کے لئے واضح خطرہ ہے۔
 انہوں نے مزید کہاکہ ہم یہ قبول نہیں کرتے کہ امریکی اتحاد ہماری قوم اور ہماری مزاحمتی تحریک کے خلاف کاروائی کرے ، اپنے ملک کی خودمختاری کے دفاع کے بارے میں ہمارا فیصلہ واضح ہے، الخزعلی نے زور دے کر کہاکہ بدقسمتی سے ہم دیکھ رہے ہیں کہ عراقی حکومت ملکی سالمیت کے خلاف امریکی جارحیت پر خاموش اور لاتعلق ہے۔
انھوں نے کہا کہ  امریکی اتحاد کو بے دخل کرنے کے لئے ہماری وزارت خارجہ کو سلامتی کونسل میں فوری کاروائی کرنا ہوگی،یادرہے کہ امریکہ عراق میں داعش کا مقابلہ کرنے کے بہانے داخل ہوا تھا تاہم زمینی حقائق بتلاتے ہیں کہ اس نے یہاں داعش کا مقابلہ کرنے کے بجائے اس کے لیے ایک سہولت کار کے فرائض انجام دیے ،دہشتگردوں کے لیے اسلحہ اور اشیائے خورد ونوش سے لے کر انھیں عراقی فوج کے محاصروں سے نکالنے تک کہ اقدام کیے اور جبکہ عراقی حکومت اپنے ملک سے داعش کے خاتمہ کا سرکاری طور پر اعلان کر چکی ہے نیز اس ملک کی پارلیمنٹ امریکی فوج کی بے دخلی کے لیے مسودہ بھی پاس کر چکی ہے اس کے باجود امریکہ غیر قانونی طور پر اس ملک میں اپنی موجودگی پر اڑا ہوا ہے اور اس قانون پر عمل درآمد ہونے کے راستہ میں رکاوٹیں کھڑی کر رہا ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین