آل خلیفہ نے ایک بار پھر فلسطینی عوام کی پیٹھ میں خنجر گھونپا ہے:فلسطینی مزاحمتی تحریک

اسرائیلی وزیر جنگ کے بحرین کے اچانک دورے پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے فلسطینی مزاحمتی کمیٹیوں نے اعلان کیا کہ بحرینی حکام نے فلسطینی عوام کی پیٹھ میں خنجر مار کر دہشت گرد گانٹز کو خوش آمدید کہا ہے۔

ولایت پورٹل:العہد نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق فلسطینی مزاحمتی کمیٹیوں نے ایک بیان جاری کیا جس میں اسرائیلی وزیر جنگ بنی گانٹز کے دورہ بحرین کی مذمت کی گئی، مزاحمتی کمیٹیوں نے بیان میں کہا ہے کہ مجرم گانٹز اور فلسطینی بچوں اور خواتین کے قاتل کے لیے بحرینی حکومت کا ردعمل فلسطینی عوام کی پیٹھ میں خنجر مارنا ہے اور صیہونی دشمن کو فلسطینی عوام کے خلاف اپنے قتل اور جرائم کے ارتکاب کی ترغیب دیتا ہے۔
 بیان میں دہشت گرد گانٹز کے ساتھ بحرین کے ردعمل کو اخلاقی گراوٹ سے  بھی تعبیر کیا گیا ہے، مزاحمتی کمیٹیوں نے اس بات پر زور دیا کہ بحرین کی جانب سے صیہونیوں کے ساتھ ذلت آمیز تعلقات کو معمول پر لانے سے صیہونی حکومت کو قانونی حیثیت حاصل نہیں ہو گی۔
 قابل ذکر ہے کہ صیہونی حکومت کے ذرائع ابلاغ نے بدھ کی شام کو خبر دی  کہ اس  حکومت کے  وزیرجنگ بنی گانٹز بحرین پہنچ گئے ہیں، بحرینی میڈیا کی خاموشی کے باوجود عبرانی زبان کے ذرائع نے اطلاع دی ہے کہ بحرینی وزیر دفاع نے ہوائی اڈے پر اپنے صہیونی ہم منصب کا استقبال کیا۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین