Code : 3828 6 Hit

امریکہ میں نسل پرستی کے خلاف مظاہروں کے دوران کولمبس کے مجسمہ بھی گرا دیا گیا

امریکہ میں نسل پرستی کے خلاف ہونے والے مظاہروں اور غلامی کی علامتوں کی تباہی کے بعد امریکہ کو کشف کرنے والے کرسٹوف کولمبس کا مجسمہ بھی گرا دیا گیا۔

ولایت پورٹل:سی این این کی رپورٹ کے مطابق امریکہ میں نسل پرستی کے خلاف کیے جانے والےمظاہروں کے بعد میری لینڈ کے شہر بالٹیمور میں ایک مظاہرے  کے دوران  ریاستہائے متحدہ کا دریافت کرنے والے کرسٹوف کولمبس کے مجسمے کو گرا دیا گیا، کرسٹوف کولمبس کے مجسمے کا انہدام امریکہ میں غلامی کے خاتمے کی کوششوں کا تسلسل ہے۔
یادرہے کہ امریکہ میں ہونے والے مظاہروں کے دوران غلامی اور نسل پرستی کی علامتوں کو تباہ کرنے کا سلسلہ میں جاری ہے جبکہ اس کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اس سلسلہ میں قصورواروں کو قانونی طور پر 10 سال قید کی سزا سنائی ہے۔
قابل ذکر ہے کہ ٹرمپ نے گذشتہ ہفتے ایک بیان میں امریکہ کے مختلف شہروں میں نسل پرستی کے خلاف حالیہ مظاہروں میں مجسموں کے انہدام پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ  اس طرح کے اقدا مات کرنے والے غندے اور اوباش بائیں بازو کا ثقافتی انقلاب مسلط کرنے کے درپے ہیں۔
واضح رہے کہ حال ہی میں امریکی پولیس کے ہاتھوں اس ملک کے سیاہ فام شہری جارج فلائیڈ کے بہیمانہ قتل کے بعد  ریاستھائے متحدہ کے متعدد شہروں میں نسلی امتیاز اور سیاہ فاموں کے ساتھ پولیس  کے نارواسلوک کے خلاف مظاہروں کی ایک لہر دوڑ گئی ہے جہاں مظاہرین نے کچھ شہروں میں مجسمے بھی توڑ دیے ہیں۔
قابل ذکر ہے کہ ان مجسموں میں سے بہت سارے غلامی کی علامت تھے لیکن ٹرمپ نے کہا کہ مظاہرین کو دہشتگرد اور غنڈے  قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ انھوں  نے امریکہ کی بنیادی اقدار اور اصولوں کو ختم کرنے کی کوشش کی ہے لہذا انھیں کڑی سے کڑی سے سزا دی جائے گی۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین