ترکی کے ہاتھوں شمالی شام اور عراق میں 22 جنگجو ہلاک

ترکی کی وزارت دفاع نے اعلان کیا ہے کہ گزشتہ 48 گھنٹوں کے دوران شمالی شام اور عراق میں فوجی کارروائیوں کے دوران 22 کرد جنگجو مارے گئے۔

ولایت پورٹل:ایسے میں جب شمالی شام اور عراق پر ترکی کے فوجی حملوں کے بارے میں بین الاقوامی تبصرے جاری ہیں، انقرہ نے ان حملوں میں ہونے والی ہلاکتوں کے اعداد و شمار فراہم کیے،ترکی کی وزارت دفاع نے اعلان کیا کہ شمالی عراق میں PKK کے 10 ارکان اور اس ملک کے شمال میں سیریئن ڈیموکریٹک فورسز گروپ کے 12 عسکریت پسندوں سمیت 22 کرد عسکریت پسند ترکی کی فوجی کارروائیوں میں مارے گئے۔
ترک ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ شمالی شام میں کرد علاقوں میں ترک فضائیہ کی پانچ روز کی کارروائیوں کے دوران کم از کم 125 جنگجو اور عام شہری ہلاک یا زخمی ہوئے ہیں۔
یاد رہے کہ عین اسی وقت جب انقرہ کی جانب سے شمالی شام پر زمینی حملے کی دھمکیاں بڑھ رہی تھیں، میڈیا نے شمالی شام میں ترک فوجی ساز و سامان کی آمد کی تصاویر شائع کیں۔
یاد رہے کہ ترکی دہشگردوں کو کچلنے کے بہانے آئے دن عراق اور شام پر حملہ کرتا رہتا ہے جبکہ ان حملوں میں دونوں ممالک کے عام شہری بھی مارے جاتے ہیں جسے لے کر عراق اور شام کی حکومتوں اور عوام میں ترکی کے خلاف شدید نفرت پائی جاتی ہے اور ان ممالک میں موجود ترک فوجی دستوں کو قابض سمجھتے ہیں۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین