Code : 417 1 Hit

عورت کے حق میں یورپ کی جھوٹی چیخ پکار ماضی کی ناانصافیوں کا پتہ دیتی ہے:رہبر انقلاب

آپ جانتے ہیں کہ موجودہ صدی کی دوسری دہائیوں تک کوئی عورت یوروپ کے کسی علاقہ میں بھی حق رائے دہی نہیں رکھتی تھی۔ جہاں ڈیمو کریسی تھی بھی وہاں عورت اپنی ملکیت و جائداد میں تصرف کا حق نہیں رکھتی تھی۔ دوسری دہائی یعنی 1916 یا 1918 کے بعد دھیرے دھیرے یوروپی ممالک میں یہ فیصلہ لیا گیا کہ عورت کو بھی مردوں کی طرح اظہار رائے اور اپنی ملکیت و جائداد میں تصرف جیسے دیگر سماجی حقوق دیئے جائیں۔

ولایت پورٹل: آپ جانتے ہیں کہ موجودہ صدی کی دوسری دہائیوں تک کوئی عورت یوروپ کے کسی علاقہ میں بھی حق رائے دہی نہیں رکھتی تھی۔ جہاں ڈیمو کریسی تھی بھی وہاں عورت اپنی ملکیت و جائداد میں تصرف کا حق نہیں رکھتی تھی۔ دوسری دہائی یعنی 1916 یا 1918 کے بعد دھیرے دھیرے یوروپی ممالک میں یہ فیصلہ لیا گیا کہ عورت کو بھی مردوں کی طرح اظہار رائے اور اپنی ملکیت و جائداد میں تصرف جیسے دیگر سماجی حقوق دیئے جائیں۔اس کا مطلب یہ ہے کہ اس سلسلہ میں یوروپ بڑی دیر سے جاگا۔ ایسا لگتا ہے کہ مغربی ممالک کھوکھلے شور شرابے اور جھوٹے دعؤوں کے ذریعہ  اب اس پسماندگی اور نا انصافی کی تلافی کرنا چاہتے ہیں۔

0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम