Code : 971 13 Hit

نوروز مبارک ہو

نوروز ایران کا قدیم اور قومی تہوار ہے جسے ایران سمیت دنیا کے کئی ممالک خاص طور سے فارسی بولنے والے مناتے ہیں۔

ولایت پورٹل:نوروز ایرانی سال کا آغاز، بہار کی آمد، فطرت اور قدرت کے حسن کا جشن ہے جو اسلام سے پہلے بھی رائج تھا،نوروز کا دوسرا نام زندگی میں امید واعتدال، امن، دوستی اور انسانی وقار کا اظہار ہے اور ایرانی عید نوروز کا جشن دھوم  دھام سے مناتے ہیں،نوروز فارسی زبان کا لفظ ہے جس کے معنی نیا دن ہے۔ نوروز 21 مارچ بمطابق یکم فروردین یعنی نئے شمسی سال کے آغاز کا جشن ہے،ایران میں جشن نوروز کوروش اور ہخامنشی بادشاہوں کے عہدوں میں بھی رائج تھا جنہوں نے اسے باقاعدہ طور پر قومی جشن قرار دیا،ایرانی قوم عید نوروز کو سال کے بڑے تہوار کے طور پر مناتی ہے. نیا سال شروع ہونے سے پہلے ہی لوگ اپنے گھروں کی صفائی شروع کر دیتے ہیں. اس کو ""خانہ تکونی"" کا نام دیا جاتا ہے. اس موقع پر لوگ ہر نئی چیز خریدنے کی کوشش کرتے ہیں ،نوروز کی ایک دلچسپ رسم یہ ہے کہ لوگ سال کے آغاز پر اپنے گھروں میں ایک خصوصی دسترخوان بچھاتے ہیں جس پر سات مختلف اور مخصوص اشیاء رکھی جاتی ہیں جن کا نام حروف تہجی کے مطابق "س" سے شروع ہوتا ہے. اس رسم کو "ہفت سین " کا نام دیا جاتا ہے،عام طور پر یہ سات اشیاء سیب، سبزگھاس، سرکہ، گندم سے تیار شدہ ایک غذا سمنو، ایک رسیلا پھل یا بیر، ایک سکہ اور لہسن پر مشتمل ہوتی ہیں،ہفت سین دسترخوان یا سین سے شروع ہونے والے سات کھانوں کے دسترخوان کو ایک تاریخی اہمیت حاصل ہے.یہ اشیاء زندگی میں سچ، انصاف، مثبت سوچ، اچھے عمل، خوش قسمتی، خوشحالی، سخاوت اور بقاء کی علامت ہیں،نوروز 12 ممالک میں منایا جاتا ہے جن میں اسلامی جمہوریہ ایران، ترکی، آذربائیجان، ہندوستان، پاکستان، ازبکستان، قرغستان، قازقستان، افغانستان، ترکمانستان، تاجکستان اور عراق شامل ہیں،اقوام متحدہ کے ادارہ یونیسکو نے نوروز کو دنیا کے غیر مادی ثقافتی ورثے کے طور پر درج کیا ہے،ایران میں لوگ جشن کے اس وقت پر ایک دوسرے کو مبارک باد دیتے اور اس کے ساتھ آنے والے نئے سال میں سلامتی اور ترقی کی دعائیں کرتے ہیں۔
سحر


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम