Code : 1154 17 Hit

دعائے عہد اور امام عصر(عج) سے تجدید بیعت

دعائے عہد ہمارے یہاں پڑھی جانے والی اہم دعاؤں میں سے ایک ہے یہ وہ دعا ہے جسے امام جعفر صادق علیہ السلام سے نقل کیا گیا ہے اور اس دعا کا مضمون در حقیقت اپنے وقت کے امام سرکار ولیعصر(عج) کے ساتھ تجدید بیعت کا عہد و پیمان ہے۔

ولایت پورٹل: قارئین کرام! دعائے عہد ہمارے یہاں پڑھی جانے والی اہم دعاؤں میں سے ایک ہے یہ وہ دعا ہے جسے امام جعفر صادق علیہ السلام سے نقل کیا گیا ہے اور اس دعا کا مضمون در حقیقت اپنے وقت کے امام سرکار ولیعصر(عج) کے ساتھ تجدید بیعت کا عہد و پیمان ہے۔(1)
چنانچہ اس دعا کی اہمیت کے متعلق خاتم المحدثین شیخ عباس قمی(رح) اپنی معروف کتاب’’مفاتیح الجنان‘‘ میں نقل کرتے ہیں:’’جو شخص بھی 40 دن صبح وقت (نماز فجر کے بعد طلوع آفتاب سے پہلے) اس دعا کو پڑھے گا وہ بارہویں امام سرکار  ولیعصر(عج) کے ناصروں میں سے ہوگا اور اگر ظہور حضرت(عج) سے پہلے اسے موت بھی آگئی تو اللہ تعالٰی اسے ظہور کے وقت قبر سے اٹھائے گا(یعنی اس کی رجعت ہوگی) تاکہ وہ اپنے مولا(عج) کی خدمت میں شرفیاب ہوسکے۔(2)
حضرت امام جعفر صادق (ع) کی ایک روایت کے مطابق جبرئیل امین سرکار ختمی مرتبت(ص) پر نازل ہوئے اور کہا:’’ یا محمد! اگر کوئی شخص ماہ رمضان میں افطار کرنے سے پہلے یہ دعا(دعائے عہد) پڑھے گا تو اللہ تعالٰی اس کی دعاؤں کو مستجاب کرے گا اس کی نماز اور روزے کو قبول کرنے کے ساتھ ساتھ اس کی دس حاجت کو بر لائے گا ۔اس کی تمام پریشانیوں کو دور کردے گا اور اسے اس کے مقصد میں کامیابی عطا کرے گا اور اس کے اعمال اپنے صدیق انبیاء کے اعمال کے ساتھ عرش پر منگوائے گا اور قیامت کے دن اس کا چہرہ 14 ویں شب کے چاند کی طرح چمکے گا۔(3)
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
حوالہ جات:
1۔دعای عهد۔
2۔مفاتیح الجنان باب سوم۔
3۔المراقبات به نقل از سید بن طاؤوس۔



0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम