Code : 520 11 Hit

آیت اللہ خامنہ ای کی نظر میں، انسانی تربیت کے لئے سب سے موزوں آغوش

وہ پہاڑوں جیسا استحکام رکھنے والے ایمان اور نسوانی مہر و عطوفت اور احساسات و جذبات کے ساتھ محبت اور مامتا کے پیاسوں کو اپنے چشمہ صبر و حوصلہ کے ذریعہ سیراب کرتی ہے۔ انسانوں کی تربیت ایسی ہی آغوشوں میں ہوسکتی ہے۔

ولایت پورٹل: عورت اپنے ان مثبت نسوانی صفات کے ذریعہ جنہیں اللہ نے اس کے وجود میں ودیعت کردیا ہے، اسی طرح مستحکم ایمان، خدا پر توکل اور اس عفت و پاکدامنی کی ہمراہ جس سے وہ اپنے گرد و پیش کو نورانی بنا دیتی ہے، معاشرہ میں ایسا منفرد کردار ادا کر سکتی ہے جو کوئی مرد بھی ادا نہیں کر سکتا۔ وہ پہاڑوں جیسا استحکام رکھنے والے ایمان اور نسوانی مہر و عطوفت اور احساسات و جذبات کے ساتھ محبت اور مامتا کے پیاسوں کو اپنے چشمہ صبر و حوصلہ کے ذریعہ سیراب کرتی ہے۔ انسانوں کی تربیت ایسی ہی آغوشوں میں ہوسکتی ہے۔
رہبر خواتین ماں آغوش تربیت
 


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम