Code : 827 193 Hit

امام باقر علیہ السلام کی نظر میں حقیقی شیعہ کون؟

امام باقر علیہ السلام نے ارشاد فرمایا:اور جو کوئی صرف یہ دعوٰی کرے کہ میں علی علیہ السلام کا چاہنے والا ہوں اور آپ سے محبت کرتا ہوں لیکن اہل عمل نہ ہو اور حضرت علی(ع) کی سیرت پر بلکل عمل نہ کرتا ہو تو وہ شیعہ نہیں ہے۔

ولایت پورٹل: آج ہر ایک مؤمن اور شیعہ یہ سوچ کر خوش ہے کہ چونکہ میں اہل بیت اطہار(ع) کا چاہنے والا ہوں اور علی(ع) کا محب ہوں تو میں ہی حقیقی شیعہ ہوں اور میں ہی وہ ہوں جس کی نجات و سعادت کی خود رسول خدا(ص) نے بشارت دی تھی:’’یا علی انت و شیعتک فازوا و سُعدوا فی الدنیا و الآخرۃ‘‘۔
قارئین کرام! اس میں کوئی شک نہیں کہ ولایت اہل بیت(ع) ایک عظیم سرمایہ ہے جو صرف اللہ تعالٰی کی توفیق و الطاف سے انسان کو نصیب ہوتی ہے۔لیکن اس کے لئے صرف زبانی جمع خرچ سے کچھ نہیں ہوگا بلکہ عملی طور پر اپنی شیعت کا ثبوت دینا ہوگا چنانچہ پانچویں امام حضرت محمد باقر علیہ السلام کا ارشاد ہے: کوئی صرف یہ بہانا بنا کر کہ وہ ہم سے محبت کرتا ہے اپنے کو شیعہ تصور نہ کرے ۔بلکہ ہمارا حقیقی شیعہ صرف وہ ہے جس میں یہ علامتیں پائی جائیں:
وہ با تقوا ہو۔اس میں تواضع،امانتداری پائی جائے۔ اپنے والدین کے ساتھ نیکی سے پیش آئے،ہمیشہ سچ بولے، فقیروں کی مدد کرے اور کثرت سے یاد خدا کرنا اس کی سرشت بن جائے۔ہمارا شیعہ وہ ہے کہ جس کی زبان جب بھی کھلے اس سے سچائی اور نیکی کے علاوہ کوئی دوسری چیز نہ نکلے۔
اور جو کوئی صرف یہ دعوٰی کرے کہ میں علی علیہ السلام کا چاہنے والا ہوں اور آپ سے محبت کرتا ہوں لیکن اہل عمل نہ ہو اور حضرت علی(ع) کی سیرت پر بلکل عمل نہ کرتا ہو تو وہ شیعہ نہیں ہے۔(کافی، جلد ۲ ، صفحه ۷۴)



0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम